اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

’قتل کا فتویٰ محض جعلسازی‘

صوبہ سندھ کے شہر کراچی کے نامور مدرسے جامعہ دارالعلوم کراچی کے صدر مفتی رفیع عثمانی نے کسی ایسے فتویٰ کی سختی سے تردید کی ہے جس میں کراچی یونیورسٹی کے مقتول ڈاکٹر شکیل اوج کو مرتد قرار دیا گیا تھا جو واجب القتل قرار پاتا ہے۔ سوشل میڈیا پر پڑھے جانے والا یہ فتویٰ ان کے لیٹر پیڈ پر جاری گیا تھا تاہم مفتی رفیع عثمانی نے اسے صر یحاً جعل سازی قرار دیا۔

گزشتہ دنوں کراچی میں فائرنگ کے ایک واقعے میں جامعہ کراچی کے شعبہ اسلامک اسٹڈیز کے روشن خیال اور دو طرفہ ابلاغ کے پر جوش داعی ڈاکٹر محمد شکیل اوج ہلاک اور ان کی ایک طالبہ زخمی ہوگئی ہیں۔ بی بی سی اردو سروس سے ان کی خصوصی گفتگو۔