اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

’لیبیا کے کنٹرول کے لیے جنگجو دست و گریباں‘

سنہ دو ہزار گيارہ میں کرنل قذافی کی حکومت ختم ہو گئی لیکن لیبیا تب سے عدم استحکام اور تشدد میں پھنسا ہوا ہے۔ حال ہی میں ایک حملے میں طرابلس کے ایک لگژری ہوٹل میں مسلح افراد نے دھاوا بول دیا اور نو افراد کو ہلاک کر دیا جن میں پانچ غیر ملکی بھی شامل تھے۔ کرنل قذافی کی حکومت ختم ہونے کے چار سال بعد بی بی سی کے نامہ نگار ایئن پینل نے جب طرابلس کا سفر کیا تو انہیں شدت پسندوں کے ہاتھوں میں جکڑا ہوا ایک ملک ملا۔ ان کی رپورٹ راجہ ذوالفقار کی زبانی۔