اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

’نجی یونیورسٹیوں میں فیسوں کی کوئی حد نہیں‘

پاکستان میں اعلیٰ تعلیم کے حصول، وظائف اور معیار کےلیے نگران ادارے ہائیر ایجوکیشن کمیشن (ایچ ای سی) کے چئیرمین، ڈاکٹر مختار احمد کا کہنا ہے کہ اگرچہ اس وقت حکومت نے ان کے ادارے کو سب سے زیادہ بجٹ دیا ہے مگر پھر بھی چیلنج اتنا بڑا ہے کہ یہ رقم بھی کم پڑے گی۔

انھوں نے مثال دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان بھی بھارت کی انڈیا انسٹیٹیوٹ آف ٹیکنالوجی (آئی آئی ٹی) کی طرز کے ادارے بنانا چاہتا ہے مگر وسائل نہیں ہیں۔ ڈاکٹر مختار احمد نے کہا کہ اگرچہ ایچ ای سی نجی شعبے اور سرکاری یونیورسٹیوں کی معیار کو بہتر کرنے کےلیے کام کر رہا ہے مگر نجی یونیورسٹیوں کی فیسوں کو کسی انضباط میں لانے کا اختیار نہیں رکھتا ہے۔

ڈاکٹر مختار احمد گزشتہ ہفتے ایک کانفرنس میں شرکت کےلیے لندن آئے تھے اور اس کے بعد وہ بی بی سی کے سٹوڈیو بھی تشریف لائے جہاں ان سے ثقلین امام نے بات کی۔