اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

’سفارت کاری کا معیار بہتر ہونے کی بجائے زوال پذیر‘

پاکستان اور بھارت کے قومی سلامتی کے مشیروں کی دہلی میں بات چیت سے پہلے دونوں ممالک کی جانب سے ایسے پیغامات سامنے آئے ہیں کہ جس نے بات چیت کا انعقاد ہی غیر یقینی بنا دیا اور ایسا لگنے لگا کہ دونوں ممالک سفارتی داؤ پیچ سے کام لے رہے ہیں۔

بی بی سی اردو کے ریڈیو پروگرام سیربین میں رونامہ پاکستان ٹو ڈے کے مدیر اور تجزیہ کار عارف نظامی سے پوچھا کہ قومی سلامتی کے مشیروں کی ملاقات سے پہلے ایسے بیانات سے فریقین کیا حاصل کرنا چاہتے ہیں۔