اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

خیبر پختونخوا میں پشتو ذریعہ تعلیم کیوں نہیں؟

دنیا بھر میں اکیس فروری کو مادری زبانوں کے عالمی دن کے طور پر منایا جاتا ہے ۔ پاکستان کے صوبہ خیبر پختونخوا میں عوامی نیشل پارٹی کی سابقہ حکومت کے تحت علاقائی زبانوں، بالخصوص پشتو کو ثانوی جماعتوں تک ذریعہ تعلیم بنانے کے لیے اقدامات کیے گئے تھے۔تاہم صوبے میں پاکستان تحریک انصاف کی موجودہ حکومت نے اُن اقدامات اور اداروں کی مدد اور حمایت ختم کردی۔

بی بی سی اردو کے پروگرام سیربین میں عمر آفریدی نے پشاور میں قائم باچا خان ایجوکیشن فاؤنڈیش کے سربراہ ڈاکٹر خادم حسین سے پوچھا کہ خیبر پختون خوا کے تیلیمی نظام میں پشتو کا اب کیا مقام ہے۔