اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

شامی پناہ گزین تیراک اولمپکس میں شمولیت

برازیل میں جمعہ سے اولمپک کھیلوں کا آغاز ہو رہا ہے۔ اس مرتبہ خاص بات یہ ہے کہ 'ٹیم ریفیوجی' کے نام سے پناہ گزینوں کی ایک ٹیم کو بھی مقابلوں میں شرکت کا موقعہ دیا گيا ہے۔ اٹھارہ سالہ شامی پناہ گزین ’یُسريٰ مردینی’ بھی اس ٹیم کا حصہ ہیں۔ یُسريٰ ایک تیراک ہیں اور ترکی سے یونان آتے ہوئے جب ان کی کشتی ڈوبنے لگی تھي تووہ بھي دیگر پناہ گزینوں کے ساتھ مل کر تيرتے ہوئے ساحل تک پہنچيں اور اس دوران ديگر لوگوں کی جان بھي بچاتي رہيں۔ جرمنی میں مقیم یُسريٰ مردینی کی کہانی، ایمن خواجہ کی زبانی۔