BBCi Home PageBBC World NewsBBC SportBBC World ServiceBBC WeatherBBC A-Z
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
 
South Asia News
BBCHindi.com
BBCPersian.com
BBCPashto.com
BBCArabic.com
BBCBengali.com
Learning English
 
 
  ہماری کھیلوں کی سائٹ
 
 
  احمد قریع، ہمہ جہت شخصیت
 
 
  کین کن میں کرنا کیا ہے؟
 
 
  شیرون کا دورۂ ہند
 
 
  ’غیرت‘ کے سات سو شکار
 
 
  قبائلی علاقوں کے بھوت اسکول
 
 
  مشرق وسطی میں طاقت کا نیا محور
 
 
  گیارہ ستمبر
آخری باتیں
 

جنگ عراق کا سچ جھوٹ
 

کراچی ساحل: زہریلی لہریں
 

موسیقی، فلم، ٹی وی ڈرامہ
 

دنیا ایک کلِک دور
 
 
 
:تازہ خبریں
 
میں غدار نہیں: مشرف
’القاعدہ اب بھی سرگرم ہے‘
اسامہ کی نئی وڈیو ٹیپ
’دراندازی بند کرائیں گے‘
سویڈش وزیر چل بسیں
جنس معلوم کرنےپرپابندی
بیمہ کمپنیاں القاعدہ پر مقدمہ کریں گی
یونان: پاکستانی ڈوب گئے
’نقشِہ راہ پر قائم ہیں‘
کراچی ساحل: پابندی برقرار
سامان میں انسان
بلوچستان: وزیر کے بھائی گرفتار
تعلقات مضبوط کرنےکی ضرورت: شیرون
لڑکا، امریکی فوجی ہلاک
بالی دھماکہ: موت کی سزا
گرینچ 09:18 - 08/07/2003
انٹرنیٹ رابطے بحال
انٹرنیٹ چھوٹے بڑے شہروں میں روزمرّہ کی ضرورت بن چکا ہے
انٹرنیٹ چھوٹے بڑے شہروں میں روزمرّہ کی ضرورت بن چکا ہے

رپورٹ:علی سلمان، لاہور

پاکستان کا انٹر نیٹ کے ذریعے دنیا بھر سے رابط منگل کی صبح بحال کر دیا گیا۔

پیر کی سہ پہر پاکستان کا دنیا بھر سے انٹرنیٹ رابطہ منقطح ہو جانے کے باعث ہزاروں پاکستانی ای میل یعنی برقیاتی ڈاک اور ویب سائٹ تک رسائی حاصل نہیں کر پا رہے تھے۔ اس رابطے کے منقطع ہوجانے کی وجہ سے بیرون ملک بسنے والے تارکیں وطن کوبھی پاکستانی اخبارات اور رسائل کی ویب سائٹس تک رسائی حاصل میں دشوارئی کا سامنا تھا۔

ذرائع کے مطابق یہ رابط ایک فنی خرابی کی بنا پر منقطع ہو گیا تھا جس کو کئی گھنٹوں کی مسلسل کوشش کے بعد ٹھیک کر لیا گیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق خرابی پیر کو دن کے تین بج کر چالیس منٹ پر شروع ہوئی جب کراچی میں مرکزی نظام خراب ہو گیا جس کی بدولت پاکستان کا دنیا بھر سے انٹرنیٹ پر رابطہ ممکن ہوتا ہے۔

سیٹلائٹ کے ذریعے چلنے والا متبادل نظام بھی پاکستان کے مقامی وقت کے مطابق ساڑھے چھ بجے بند ہو گیا جس کے بعد ملک بھر میں انٹرنیٹ نظام نے کام کرنا چھوڑ دیا۔

پی ٹی سی ایل کے ممبر آپریشن کیپٹن ظاہر نے بتایا کہ مرکزی کیبل یعنی ایس ایم ڈبلیو تھری میں خرابی پیدا ہو گئی تھی جس کے بعد کراچی میں آندھی اور طوفان کے باعث ’بیک اپ‘ کا نظام بھی بند ہو گیا۔

انہوں نے بتایا کہ انٹرنیٹ سروس کی بحالی کے لئے ہنگامی اقدامات کئے گئے ہیں۔ اسلام آ باد سے فنی ماہرین کی ٹیمیں کراچی روانہ کی گئیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے فرانس اور سنگاپور سے بھی رابطہ کیا ہے جو کانفرنس کال پر مسلسل موجود ہیں۔

پی ٹی سی ایل کے عہدیدار نے توقع ظاہر کی کہ سیٹلائٹ کا نظام جلد بحال ہو جائے گا جو کہ مکمل انٹرنیٹ سروس کا بیس فیصد ہے۔ انہوں نے کہا کہ مکمل بحالی کے وقت کے بارے میں اندازہ لگانا مشکل ہے۔

انٹرنیٹ سروس فراہم کرنے والے ایک نجی ادارے کے ایک اہلکار نے بتایا کہ انہیں حکومتی اہلکاروں نے آگاہ کیا ہے کہ مزید پندرہ گھنٹے تک سروس بحال ہونے کا امکان نہیں ہے۔

حکام نے یہ وضاحت نہیں کی مرکزی کمپیوٹر سسٹم میں کیا خرابی پیدا ہوئی ہے۔ انٹرنیٹ سروس فراہم کرنے والے ادارے کے ایک اہلکار کا کہنا تھا کہ پاکستان میں اکثر ہیکروں کی وجہ سے ایک دو گھنٹے کے لئے سروس کے بند ہونے کی تو نظیر موجود ہے لیکن یہ خلاف معمول طویل بندش ہے۔

انٹرنیٹ سروس بند ہونے سے جہاں لاکھوں صارفین کی نجی زندگی متاثر ہوئی ہے وہاں پاکستان کے تجارتی حلقوں کو بھی پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ اخبارات انٹرنیٹ پر اپنے صفحات شائع نہیں کر سکے۔
 
 

 urdu@bbc.co.uk
 
 
 
 < عالمی خبریں 43 زبانوں میںواپس اوپر ^^ BBC Copyright