BBCUrdu.com
  •    تکنيکي مدد
 
پاکستان
انڈیا
آس پاس
کھیل
نیٹ سائنس
فن فنکار
ویڈیو، تصاویر
آپ کی آواز
قلم اور کالم
منظرنامہ
ریڈیو
پروگرام
فریکوئنسی
ہمارے پارٹنر
ہندی
فارسی
پشتو
عربی
بنگالی
انگریزی ۔ جنوبی ایشیا
دیگر زبانیں
 
وقتِ اشاعت: Sunday, 10 August, 2003, 11:19 GMT 15:19 PST
 
یہ صفحہ دوست کو ای میل کیجیئے پرِنٹ کریں
انٹرنیٹ: چلو میلہ لگائیں
 

مختلف جگہوں سے انٹرنیٹ کے ذریعے ملاقات کا وقت اور مقام طے کر کے لوگوں کو کسی ایک ہی جگہ جمع کرنے کےخیال کی ابتدا امریکہ کے شہر نیو یارک میں ہوئی تھی۔

لندن پہنچنے والوں کا تازہ پروگرام اسی سال جون میں مرتب ہوا اور اگست کی ایک شام انٹرنیٹ کے لگ بھگ دو سو جیالوں کے درمیان بالمشافہ ملاقات لندن میں ہوگئی۔

لندن کے اس "انٹرنیٹ میلے" میں شامل افراد کو مقامِ ملاقات اور دیگر تفصیلات لندن کے فلیش موب ویب سائٹ نے فراہم کیں۔ ان لوگوں کو سوہو کے ایک شراب خانے میں جمع ہونے کا کہا گیا جہاں انہیں مزید بتایا گیا کہ یہاں سے انہیں جانا کہاں ہے۔

اور انٹرنیٹ کے ان شیدائیوں کو آخری ہدایات یہ ملیں کہ پہلے انہیں لندن کے صوفہ اسٹور میں پہنچ کر وہاں نمائش پر رکھا ہوا فرنیچر دیکھنا ہے اور اس کے بعد انہیں کسی دوست کو موبائل فون پر اس کے بارے میں اس شرط کے ساتھ بتانا ہے کہ گفتگو میں انگریزی کاحرف ’او‘ زبان پر نہ آنے پائے۔

اور بعد میں اس اچانک واقعہ پر اپنے تاثرات بیان کرتے ہوئے رابنسن کا کہنا تھا: ’پہلے تو میں یہ سمجھا کہ اسٹور کے باہر کوئی لڑائی ہوگئی ہے۔ پھرکچھ ہی لمحوں بعد مجھے یہ خیال آیا کہ کہیں اسٹور پر کوئی ’بڑا آدمی‘ تو نہیں آن پہنچا۔‘

انٹرنیٹ کے ذریعے لندن میں اس ’جمِ غفیر‘ کے روحِ رواں حضرات میں سے ایک صاحب جن کا نام زی ہے، کہتے ہیں: ’اس طرح کے کام ایسے ہی ہوا کرتے ہیں کیونکہ اس میں کوئی نظریاتی دشواری نہیں ہوتی۔ اور پھر یہ کہ اتنی گرمی میں تو اسی طرح کا موج میلہ ہوسکتا ہے۔‘

یورپ میں انٹرنیٹ کے ذریعے لوگوں کا اجتماع اٹلی کے شہر روم میں بھی ہو چکا ہے جہاں نیٹ کے جیالے کتابوں کی ایک دکان میں پہنچ گئے اور دکان پر موجود اسٹاف سے ان کتابوں کے بارے میں پوچھنا شروع کردیا جن کا وجود ہی نہیں تھا۔

کینڈا کے شہر ٹورنٹو میں بھی اسی طرح کا ایک میلہ لگنا تھا لیکن اس میلے کو اس بنا پر منسوخ کرنا پڑ گیا کہ میلے میں شریک ہونے والے افراد کی تعداد پولیس کی تعداد سے زیادہ ہوگئی تھی۔

کہنے والے کہتے ہیں کہ جس طرح انٹرنیٹ کے ذریعے ان میلوں کا آغاز ہوا تھا اسی طرح یہ ختم بھی ہو جائے گا۔

 
 
تازہ ترین خبریں
 
 
یہ صفحہ دوست کو ای میل کیجیئے پرِنٹ کریں
 
 

واپس اوپر
Copyright BBC
نیٹ سائنس کھیل آس پاس انڈیاپاکستان صفحہِ اول
 
منظرنامہ قلم اور کالم آپ کی آواز ویڈیو، تصاویر
 
BBC Languages >> | BBC World Service >> | BBC Weather >> | BBC Sport >> | BBC News >>  
پرائیویسی ہمارے بارے میں ہمیں لکھیئے تکنیکی مدد