رحیم یار خان: بسوں کے تصادم میں 30 افراد ہلاک،60 سے زائد زخمی

فائل فوٹو تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption ززحمیوں کو ہسپتال منستقل کیا جا رہا ہے

پاکستان کے سرکاری ذرائع ابلاغ کے مطابق صوبہ پنجاب کے شہر رحیم یارخان میں دو مسافر بسوں کے تصادم میں کم سے کم 30 افراد ہلاک اور درجنوں زخمی ہو گئے ہیں۔

رحیم یار خان پولیس کے ترجمان ارشد نواز کے مطابق حادثہ صبح 6 بجے کے قریب خان پور کے علاقے میں پیش آیا جہاں کراچی سے بہاولپور آنے والی اور سیالکوٹ سے کراچی جانے والی دو مسافر بسیں آپس میں سامنے سے ٹکرا گئیں۔

ارشد نواز نے صحافی ناضر خان کو بتایا کہ حادثے کی وجہ دھریجہ پھاٹک کے قریب ایک خطرناک موڑ اور بس ڈرائیوروں کی تیز رفتاری تھی جب ایک بس دوسری گاڑی کو اوور ٹیک کرتے ہوئے سامنے سے آنے والی بس سے ٹکرا گئی۔

مقامی لوگوں کے مطابق کئی زخمی بروقت طبی سہولتیں نہ ملنے کی وجہ سے بھی لقمہ اجل بنے،، کیونکہ زخمیوں کو رحیم یار خان منتقل کرنے کے لیے بھی ایمبولینسیں اوچ شریف،لیاقت پور اور رحیم یار خان سے منگوانا پڑیں۔

زخمیوں کو رحیم یار خان اور خان پور کے ہسپتالوں میں لے جایا گیا ہے بیشترزخمیوں کی حالت تشویش ناک بتائی جا رہی ہے۔

پولیس اور ریسکیو کے اہلکاروں کہنا ہے کہ ہلاک اور زخمی ہونے والوں میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں۔

حادثہ اتنا شدید تھا کہ ریسکیو آپریشن کے دوران بسوں کو کاٹ کر لوگوں کو نکالا گیا۔

وزیرِ اعلی پنجاب نے حادثے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے زخمیوں کو ہر ممکن امداد پہنچانے کی ہدادیت کی ہے۔ انھوں نے واقعے کی رپورٹ بھی طلب کی ہے۔

اسی بارے میں