جنید جمشید کی نمازِ جنازہ کراچی میں ادا کر دی گئی

جنید تصویر کے کاپی رائٹ EPA
Image caption جنید جمشید کی میت بدھ کی شب ایئر فورس کے خصوصی طیارے کے ذریعے کراچی پہنچائی گئی تھی

پاکستان کے نامور نعت خواں اور سابق گلوکار جنید جمشید کی نمازِ جنازہ کراچی میں ادا کر دی گئی ہے۔

جنید جمشید حال ہی میں چترال سے اسلام آباد آتے ہوئے پی آئی اے کے طیارے کے حادثے میں ہلاک ہوگئے تھے اور ان کی میت ڈی این اے ٹیسٹ کے بعد ورثا کے حوالے کی گئی تھی۔

جنید جمشید کی میت بدھ کی شب ایئرفورس کے خصوصی طیارے کے ذریعے کراچی پہنچائی گئی جہاں جمعرات کی صبح ان کی نمازِ جنازہ ادا کی گئی جس میں عوام کی بڑی تعداد شریک ہوئی۔

تبیلغی جماعت کے مبلغ مولانا طارق جمیل نے نماز کی امامت کی اور اس سے پہلے ایک طویل خطبہ دیا جو کئی ٹی وی چینلز پر لائیو نشر کیا گیا۔

جمعرات کی دوپہر جنید جمشید کی میت شفا ہسپتال سے نیوی اہلکاروں کے ایسکارٹ کے ساتھ ڈیفینس میں واقع اے کے ڈی گراؤنڈ پہنچائی گئی۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption جنید جمشید چترال سے اسلام آباد آتے ہوئے پی آئی اے کے اے ٹی آر طیارے کے حادثے میں ہلاک ہوگئے تھی

ان کی میت کو پاکستان کے قومی پرچم میں لپیٹا گیا تھا۔ جنید جمشید کے بھائی کا کہنا تھا کہ دل دل پاکستان ان کی شناخت بنی تھی اور اسی پاکستان کے جھنڈے میں ان کی میت کو لپیٹا گیا ہے۔

نماز میں ڈاکٹر فاروق ستار، عمران اسماعیل کے علاوہ تحریک انصاف، جماعت اسلامی، پاک سرزمین پارٹی کے رہنماؤں، سابق کرکٹر انضمام الحق اور فنکاروں سمیت ہزاروں کی تعداد میں شہریوں نے شرکت کی۔

نماز جنازہ کی ادائیگی کے بعد جنید جمشید کی میت دارالعلوم کورنگی منتقل کی گئی جہاں ان کی وصیت کے مطابق تدفین کر دی گئی ہے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں