لاہور کے چڑیا گھر میں چیتے اور شیروں کے جوڑوں کی آمد

شیر

جنوبی افریقہ سے درآمد کیا گیا چیتے اور سفید شیروں کا ایک، ایک جوڑا لاہور کے چڑیا گھر پہنچ گیا ہے۔

ان دونوں جوڑوں کی درآمد پر 1 کروڑ 80 لاکھ روپے لاگت آئی ہے۔

لاہور چڑیا گھر کے ڈپٹی ڈائریکٹر تنویر احمد نے نامہ نگار حنا سعید کو بتایا کہ پنجاب کے کسی چڑیا گھر میں پہلی بار سفید شیروں کا جوڑا لایا گیا ہے جو شائقین کی توجہ کا مرکز بن گیا ہے۔

کراچی میں شیر کو سڑک پر گھمانے پر ایک شخص گرفتار

’اب سوزی بچوں کو نظر آتی ہے نہ ہمیں‘

'یہ افریقی سفید شیروں کا جوڑا انتہائی نایاب اور خوبصورت ہے جسے ہم نے ٹینڈر کے ذریعے تین ماہ قبل خریدا تھا۔ لوگوں کی ایک بڑی تعداد اس کو دیکھنے کے لیے چڑیا گھر آ رہی ہے اور اس سے ہماری ٹکٹ سیل بھی کافی بڑھ گئی ہے جبکہ ایک وائٹ ٹائیگر کا جوڑا دو ہفتے تک لاہور پہنچ جائے گا۔'

تفصیلات کے مطابق سفید شیروں کا جوڑا 99 لاکھ 90 ہزار جبکہ چیتے کا جوڑا 79 لاکھ 50 ہزار روپے میں چڑیا گھر کے ذاتی فنڈز سے خریدا گیا ہے۔

ڈائریکٹر جنرل وائلڈ لائف اینڈ پارکس پنجاب خالد عیاض خان نے بتایا ہے کہ نر چیتے کی عمر 4 سال دو دن اور مادہ چیتے کی عمر 3 سال دو ماہ اور 25 دن ہے جبکہ نر سفید شیر کی عمر 4 سال اور مادہ سفید شیر کی عمر 3 سال 2 دن ہے۔

چڑیا گھر لاہور کے ڈپٹی ڈائریکٹر تنویر احمد کا کہنا ہے کہ ہتھنی سوزی کی موت کے بعد اب تک ہاتھی انکلوژر خالی ہے لیکن اب ٹینڈر بھر دیے گئے ہیں اور جلد ہی تمام ویران انکلوژر بھر جائیں گے۔

'ایک ہتھنی، ایک مادہ گینڈا، ایک لاما کا جوڑا، ایک نر دریائی گھوڑا اور تین زرافے خریدنے کے ٹینڈر منظور ہو گئے ہیں اور جلد ہی وہ چڑیا گھر کی زینت بڑھائیں گے۔ ہماری اب کوشش ہے کہ جس جانور کا نر ہے تو اس کی مادہ خرید کر ہم جانوروں کو جوڑوں میں رکھیں تاکہ وہ ایک لمبی صحت مند زندگی گزار سکیں۔'

البتہ موسمی تبدیلیوں کے باعث لاہور کے چڑیا گھر میں فی الحال موجود جانوروں کی صحت متاثر ہو رہی ہے۔ چند روز قبل ایک ہاگ ڈیئر یعنی پاڑا اچانک ہلاک ہو گیا۔ چڑیا گھر انتظامیہ کا کہنا ہے یہ حادثہ موسمی تبدیلیوں کے باعث ہوا ہے لیکن اب باقی تمام جانوروں کے لیے موثر انتظامات کر لیے گئے ہیں اور ان کو غذا میں بھی ایسے اجزا ڈال کر دیے جا رہے ہیں جن سے ان کی قوت مدافعت بڑھے گی۔

Image caption ہرن کے پنجرے میں لڑائی میں ایک کالا ہرن زخمی ہو گیا اور ایک روز بعد اس کی موت ہو گئی

دوسری جانب گذشتہ ہفتے کے دوران لاہور کے چڑیا گھر میں دوسری موت اس وقت ہوئی جب ہرن کے پنجرے میں لڑائی میں ایک کالا ہرن زخمی ہو گیا اور ایک روز بعد اس کی موت ہو گئی۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں