پاکستان کے موسمیاتی پناہ گزین
اپ کی ڈیوائس پر پلے بیک سپورٹ دستیاب نہیں

پاکستان کے موسمیاتی پناہ گزین کون ہیں؟

پناہ گزینوں کی عالمی تنظیم کے مطابق 2050 تک دنیا بھر میں ڈھائی کروڑ سے ایک ارب تک لوگ موسمیاتی تبدیلی کے نتیجے میں آنے والی قدرتی آفات سے بے گھر ہو کر اپنے علاقے اور ملک چھوڑنے پر مجبور ہوسکتے ہیں۔

گلوبل کلائمیٹ انڈیکس 2017 کے مطابق پاکستان ماحولیاتی تبدیلی سے سب سے زیادہ متاثر ہونے والے ملکوں میں ساتویں نمبر پر ہے۔ یہاں پہلے ہی سمندر کے کٹاؤ، خشک سالی اور بےوقت کی تیز بارشوں کے نتیجے میں آنے والے سیلاب سے لاکھوں لوگ ہجرت کر چکے ہیں۔

لیکن کیا پاکستان کے پاس ماحولیاتی تبدیلی سے نمٹنے کے لیے کوئی باقاعدہ پالیسی موجود ہے؟ شمائلہ جعفری کی رپورٹ