پاکستان الیکشن 2018

ملٹی میڈیا

فیچر اور تجزیے

فلم جھنجھنا کا ایک ریویو

پچیس جولائی کو ملک کے تقریباً 272 سینماؤں میں بیک وقت ریلیز ہونے والی پولٹیکل ایکشن فینٹسی تھرلر ’جھنجھنا‘ نے اپنی مقبولیت کے اعتبار سے پچھلے تمام ریکارڈ توڑ دیے۔

کامیابی کے بعد وزارت عظمیٰ کی شیروانی تک کا سفر

پاکستانی انتخابات کے نتائج کے مطابق تحریکِ انصاف وفاق میں حکومت بنانے کی پوزیشن میں ہے۔ آئیے دیکھتے ہیں کہ انتخابات کے بعد ملک کے نئے وزیراعظم کو اپنے منصب تک پہنچنے کے لیے مزید کتنے مراحل سے گزرنا ہو گا۔

انتخابات میں جیپ چلی نہ شیر دھاڑا

پاکستان میں عام انتخابات میں ہارنے والے امیدواروں میں سابق وزیراعظم سے لے کر ایسے نام بھی شامل ہیں جن کے بارے میں تجزیے کیے جا رہے تھے کہ یہ آئندہ حکومت سازی میں اہم کردار ادا کر سکتے ہیں۔

44 سال کا سفر: پہلی وکٹ سے پہلی بار وزیراعظم بننے کا سفر

پاکستان تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان کے لیے وزیراعظم بننے کی راہ ہموار دکھائی دے رہی ہے لیکن عمران خان کی کامیابیوں کے سفر کی ایک لمبی داستان بھی ہے۔

پاکستانی ووٹر کن چیزوں پر ووٹ دیتا ہے؟

بی بی سی نے یہ جاننے کی کوشش کی ہے کہ پاکستانی ووٹر کی سوچ آخر ہے کیا اور وہ ووٹ دینے سے پہلے کن چیزوں کو مدِ نظر رکھتا ہے؟

’انتخابی مہم میں غالب رنگ بےیقینی اور تقسیم کا رہا‘

الیکشن 2018 کے لیے انتخابی مہم قریباً دو ماہ جاری رہنے کے بعد پیر کی شب ختم ہو رہی ہے اور اس مہم کو قریب سے دیکھنے والوں کے مطابق اس میں غالب رنگ بےیقینی اور تقسیم کا رہا ہے۔

25 جولائی کا اڑتا تیر

اگر جسٹس صدیقی کی جانب سے کسی کو عمر قید یا سزائے موت دینے کے فیصلے کو قبول کیا جا سکتا ہے تو پھر ان کے اس الزام پر بھی کان دھرنے کی ضرورت ہے کہ اعلیٰ عدلیہ اس وقت انٹیلی جینس ایجنسیوں کے نرغے میں ہے۔

خاکی انڈے

اُف خدایا! خاکی انڈوں کا وزن اتنا ہے کہ اب فیصلہ کرنا ہی پڑے گا۔ ٹوکرا بھر خاکی انڈے یا چھ بارآور انڈے؟ یوں تو فیصلے کا بوجھ بھی خاصا ہوتا ہے لیکن جتنا بھی ہو، خاکی انڈوں سے زیادہ نہیں ہوتا۔

شفیق مینگل: ’دہشت کی علامت‘ سے انتخابات تک

بلوچستان میں ایک زمانے میں دہشت کی علامت سمجھے جانے والے شفیق مینگل پرعزم ہیں کہ 25 جولائی کے دن صوبے کے عوام انھیں پارلیمان کا رکن منتخب کر لیں گے۔

ملٹی میڈیا