اکیاون فیصد پاکستانی وزیر اعظم عمران خان سے خوش

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption پاکستان تحریک انصاف 2018 میں ہونے والے انتخابات کے بعد پارلیمان میں سب سے بڑی جماعت بن کر سامنے آئی

پاکستان میں رائے عامہ کے ایک حالیہ جائزے کے مطابق ملک میں 51 فیصد افراد کے خیال میں حکومت سنبھالنے سے اب تک وزیر اعظم عمران خان کی کارکردگی اچھی رہی ہے۔

دنیا بھر میں سیاسی جماعتوں کے لیے عوام کی رائے خاصی اہمیت کی حامل ہوتی ہے کیونکہ یہ رائے اُن کی طاقت میں آنے اور طاقت سنبھالنے کے بعد اس بات کی نشاندہی کرتی ہے کہ عوام اپنے سیاسی رہنماؤں سے کتنی خوش ہیں۔

یہ بھی پڑھیے

’عمران خان ویسے ہی مفکر ہیں جیسے ڈونلڈ ٹرمپ‘

سو دن عمران خان کے، نئے پاکستان کے

اقبال کا شاہین اور عمران خان

پاکستان میں رائے عامہ کے جائزے کرنے والے ادارے گیلپ اینڈ گیلانی نے وزیر اعظم پاکستان عمران خان اور پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کے بارے میں عوامی رائے کا ایک جائزہ کیا جس میں 1141 افراد نے حصہ لیا۔ ادارے کے مطابق جائزے میں شامل افراد ملک بھر میں مختلف آراء رکھنے والی عوام کی نمائندگی کرتے ہیں۔

جہاں وزیر اعظم عمران خان اور سیاسی جماعت پاکستان تحریک انصاف کے لیے یہ اعداد شمار خوش آئند ہیں وہیں اِن پر گہری نظر ڈالیں تو یہ بات سامنے آتی ہے کہ وزیر اعظم کی مقبولیت شہری علاقوں اور پچاس سال سے کم عمر افراد میں زیادہ ہے جبکہ دیہی علاقہ جات میں 49 فیصد افراد کے خیال میں وزیر اعظم کی کارکردگی یا تو خراب رہی یا بہت خراب رہی۔ دیہی علاقوں میں 47 فیصد افراد وزیراعظم کی کارکردگی کے بارے میں مثبت رائے رکھتے ہیں۔

پچاس سال سے زیادہ عمر کے افراد میں عوامی رائے کے بر عکس 51 فیصد کے خیال میں وزیر اعظم کی کارکردگی یا تو خراب رہی یا بہت خراب رہی اس کے مقابلہ میں 43 فیصد وزیر اعظم کی کار کردگی کو مثبت نطر سے دیکھتے ہیں۔

گیلپ اینڈ گیلانی پاکستان کی جانب سے چاروں صوبوں میں یہ جائزہ کیا گیا اور اس میں سروے میں شامل افراد سے پوچھا گیا کہ اُن کی رائے میں وزیر اعظم عمران خان کی 2018 کے انتخابات جیتنے کے بعد اب تک کارکردگی کیسی رہی۔ اس سوال کے جواب میں 13فیصد کے خیال میں کارکردگی بہت اچھی تھی 38 فیصد کے خیال میں اچھی جبکہ 26 فیصد کی نظر میں خراب اور 20 فیصد کی نظر میں بہت خراب۔ سروے میں شامل بقیہ 3 فیصد نے یا تو کوئی رائے نہیں دی یا اُنہوں نے کارکردگی کے بارے میں لاعلمی کا اظہار کیا۔

اسی بارے میں