آشیانہ اقبال اور رمضان شوگر ملز: شہباز شریف اور حمزہ شہباز پر فرد جرم عائد

شہباز شریف تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

لاہور کی احتساب عدالت نے قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف اور سابق وزیر اعلی پنجاب میاں شہباز شریف اور ان کے بیٹے حمزہ شہباز پر اختیارات کا ناجائز استعمال اور سرکاری حزانے کو کروڑوں روپے کا نقصان پہنانے کے مقدمات میں فرد جرم عائد کردی ہے۔

حمزہ شہباز قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف میاں شہباز شریف کے صاحبزادے ہیں اور وہ پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف ہیں۔

نامہ نگار شہزاد ملک کے مطابق لاہور کی احتساب عدالت کے جج نجم الحسن نے ان ملزمان کے خلاف آشیانہ اقبال اور رمضان شوگر ملز کے مقدمے کی سماعت کی تو نیب کے پراسیکوٹر وارث علی جنجوعہ نے عدالت کو بتایا کہ ملزمان پر ان دونوں مقدمات میں فرد جرم عائد ہونا ہے۔

اس پر جج نے نیب کے پراسیکوٹر سے استفسار کیا کہ رمضان شوگر ملز کا ریفرنس کیا ہے، جس پر وارث علی جنجوعہ نے عدالت کو بتایا کہ اس مقدمے میں رمضان شوگر ملز کی طرف جانے والے نالے کی تعمیر پر21 کروڑ روپے خرچ کیے گئے ہیں۔

واضح رہے کہ رمضان شوگر ملز کے مقدمے میں جب شہباز شریف نے لاہور ہائی کورٹ میں ضمانت کی درخواست دی تھی تو اس وقت بھی نیب کے پراسیکوٹر نے یہی موقف اپنایا تھا کہ اس نالے کی تعمیر سے سرکاری خزانے کو کروڑوں روپے کا نقصان پہنچا ہے جس پر عدالت نے ریمارکس دیے کہ اگر نیب کا یہ موقف تسلیم کرلیا جائے تو پھر کوئی بھی منتخب رکن اسمبلی ترقیاتی سکیم نہیں دے گا۔

یہ بھی پڑھیے

شہباز شریف کی ضمانت منظور، فوری رہائی کا حکم

’جب نیب کا نوٹس ملا میں پیش ہوا۔ آج کیا قیامت ٹوٹ پڑی‘

لاہور ہائی کورٹ ان دونوں مقدمات میں میاں شہباز شریف کی ضمانت کی درخواست منظور کر چکی ہے۔

قومی احتساب بیورو نے ہائی کورٹ کے اس فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ میں اپیل دائر کر رکھی ہے جس کی سماعت جسٹس عظمت سعید کی سربراہی میں سپریم کورٹ کا ایک تین رکنی بینچ کرے گا۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP/Getty Images

احتساب عدالت میں ان مقدمات کی سماعت کے دوران میاں شہباز شریف اپنی نشست سے اُٹھ گئے اور جج کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ اُنھوں نے گذشتہ دس سالوں کے دوران مختلف ترقیاتی منصوبوں کی مد میں ریاست کے 23 ارب روپے سے زیادہ کی رقم بچائی ہے۔

اُنھوں نے کہا کہ کبھی بھی سرکاری پیسہ غلط استعمال نہیں کیا۔

میاں شہباز شریف کا کہنا تھا کہ ان کا اس نالے کی تعمیر سے کچھ لینا دینا نہیں ہے جس پر احتساب عدالت کے جج نے میاں شہباز شریف کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ وہ اپنی نشست پر بیٹھ جائیں اُنھیں اپنی صفائی کا بھر پور موقع دیا جائے گا۔

احتساب عدالت میں ان دونوں باپ بیٹے پر فرد جرم عائد کردی گئی تاہم میاں شہباز شریف اور حمزہ شہباز نے صحت جرم سے انکار کیا ہے۔ عدالت نے آئندہ سماعت پر سرکاری گواہوں کی تفصیلات طلب کرلی ہیں۔

اسی بارے میں