آخری وقت اشاعت:  بدھ 17 مارچ 2010 ,‭ 09:15 GMT 14:15 PST

کوئٹہ میں دھماکہ، ایک ہلاک

اس مواد کو دیکھنے/سننے کے لیے جاوا سکرپٹ آن اور تازہ ترین فلیش پلیئر نصب ہونا چاہئیے

ونڈوز میڈیا یا ریئل پلیئر میں دیکھیں/سنیں

بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ میں ایک مکان میں دھماکے سے ایک شخص ہلاک جبکہ مکان کا کچھ حصہ مکمل طور پر تباہ ہوگیا ہے۔

مکان کے رہائشی کے مطابق دھماکہ گیس لیکج سے ہوا ہے جبکہ پولیس نے کہاہے کہ مذکورہ شخص گھر میں بم بنا رہا تھا۔

پولیس حکام کے مطابق کوئٹہ کے سیٹلائٹ ٹاؤن میں اتحاد کالونی کے قریب بدھ کی صبح دس بجے انور محمد نامی شخص کے مکان میں زوردار دھماکہ ہوا جس کی آواز دور دور تک سنی گئی۔

دھماکے سے مذکورہ مکان کے مہمان خانےسمیت دو کمرے مکمل طور پر تباہ ہوگئے اور ملبے تلے دب کر خلیل احمد نامی شخص شدید زخمی ہو گیا جسے فوری طور پر سول ہسپتال کوئٹہ پہنچایا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لا کر چل بسا۔

فرنٹیئر کور اور پولیس نے دھماکے کے بعد علاقے کو گھیر لیا

دھماکے کے وقت مکان کے دوسرے کمروں میں خواتین اور بچے موجود تھے جو دھماکے سے محفوظ رہے۔


دھماکے کے بعد پولیس، فرنٹیئر کور اور بم ڈسپوزل کاعملہ موقع پر پہنچ گیا۔ پولیس کے مطابق تباہ شدہ کمروں سے بارودی مواد اور کالعدم تنظیم لشکرجھنگوی کے بینر برآمد ہوئے ہیں۔

پولیس افسران کے مطابق دھماکہ بارودی مواد پھٹنے سے ہوا اور مذکورہ شخص بم بنانے کی کوشش کر رہا تھا۔ تاہم موقع پر موجود نور محمد کے ایک رشتہ دار نے بی بی سی کو بتایا ہے کہ دھماکہ گیس پائپ لائن پھٹنے سے ہوا ہے۔

پولیس کے مطابق مذکورہ مکان کے رہائشیوں سے تفتیش کے بعد اصل صورتحال واضح ہو جائےگی کہ ان کے مہمان خانے میں ٹھہرا ہوا شخص کون تھا اور کس مقصد کے لیے ان کےگھر قیام پذیر تھا۔

نور محمد کے ایک ہمسائے نصیر احمد نے بی بی سی کو بتایا کہ نور محمد بڑیچ نے سولہ ماہ قبل یہ مکان کرایے پر حاصل کر کے رہائش اختیار کی تھی اور نور محمد اور ان کے بھائی فروٹ مارکیٹ میں محنت مزدوری کر کے روزی کماتے ہیں۔

[an error occurred while processing this directive]

BBC navigation

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔