استغاثے کو مزید گواہ پیش کرنے کی ہدایت

پنجاب کے شہر سرگودھا میں انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے پانچ امریکی شہریوں کے خلاف مقدمہ میں سرکاری گواہوں کے بیانات ریکارڈ کرنے کے بعد استغاثہ کو مزید گواہ پیش کرنے کی ہدایت کی ہے۔

پانچوں امریکی ملزموں کے خلاف مقدمہ کی سماعت سرگودھا جیل کے اندر ہوئی۔

مقدمہ پر سماعت کے بعد سرکاری وکیل ندیم اکرم چیمہ نے بی بی سی کو بتایا کہ منگل کے روز استغاثہ کی طرف سے تین گواہوں کو پیش کیا گیا۔ عدالت نےتینوں سرکاری گواہوں کے بیانات قلمبند کیے جبکہ امریکی ملزموں کے وکلا نے ان پر جرح کی۔

امریکی شہریوں کو سرگودھا پولیس نے گرفتار کیا تھا اور ان پر شدت پسندوں کے ساتھ ملکر دہشت گرد کارروائیوں کی منصوبہ بندی کرنے کا الزام ہے۔

لاہور سے ہمارے نامہ نگار عبادالحق نے بتایا کہ سرکاری وکیل ندیم اکرم چیمہ کے بقول منگل کو جن تین گواہوں کو عدالت میں پیش کیا گیا ان میں سائبر کرائم کے ماہر منظر عباس بھی شامل ہیں۔

دوسری جانب امریکی شہریوں کے وکیل بیرسٹر حسن کھچیلا نے بی بی سی کو بتایا کہ سائبر کرائم کے ماہر نے عدالت میں ایسی ای میل ایڈیس کا ریکارڈ پیش کیا جو بقول ان کے زیرِ حراست امریکی شہری استعمال کرتے تھے ۔تاہم انہوں نے سرکاری گواہ پر جرح کے دوران یہ کہا کہ جو ای میل ایڈیس عدالت میں پیش کیا گیا اس کا کوئی وجود ہی نہیں ہے۔

وکیل صفائی کے مطابق سرکاری گواہ سب انسپکٹر نذیر نے امریکی شہریوں کی گرفتاری اور ان سے برآمدگی کے بارے میں آج جو بیان دیا وہ پولیس حکام کے بیان کی نفی کرتا ہے۔

بیرسٹر حسن کے بقول استغاثہ کے تیسرے گواہ نے جو مواد عدالت میں پیش کیا اس پر ان کا یہ اعتراض تھا کہ قانون کے تحت عدالت میں قابل پذیرائی نہیں ہے۔سرکاری وکیل کے مطابق اب تک استغاثہ کی طرف سے سترہ سرکاری گواہوں کو عدالت میں پیش کیا جاچکا ہے جبکہ امکان ہے کہ آئندہ سماعت پر تفتیشی آفیسر سمیت مزید گواہ پیش کیے جائیں گے۔

انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے سرگواہوں کے بیانات ریکارڈ کرنے کے بعد مزید سماعت چھ مئی تک ملتوی کردی۔

خیال رہے کہ گرفتار پانچوں امریکی شہریوں نے اپنے خلاف عائد کی جانے والی فردجرم کو مسترد کرچکے ہیں اور بقول ان کے ان جو الزامات عائد کیے گئے ہیں ان میں کوئی حقیقت نہیں ہے۔

امریکی ریاست ورجینیا سے تعلق رکھنے والے ان پانچوں امریکی شہریوں کو سرگودھا پولیس نےگزشتہ برس نو دسمبر کو حراست میں لیا تھا اور پولیس کے مطابق پانچوں امریکی شہری امریکہ کے وفاقی تحقیقاتی ادارے ایف بی آئی کو مطلوب ہیں۔

اسی بارے میں