برطانوی وزیر خارجہ کا دورۂ پاکستان

Image caption ولیم ہیگ پاکستان کےدورے کے دوران مزارے قائد پر حاضری بھی دیں گے

برطانیہ کے نو منتخب وزیر خارجہ ولیم ہیگ تین روزہ دورے پر کل اسلام آباد پہنچ رہے ہیں جہاں دونوں ممالک کے وزرائے خارجہ کے درمیان مذاکرات ہوں گے جبکہ ولیم ہیگ صدر آصف علی زرداری اور وزیر اعظم یوسف رضا گیلانی سے بھی ملاقاتیں کریں گے۔

برطانیہ کے وزیر خارجہ کے اس دورے کا بڑی اہمیت دی جا رہی ہے۔ دفتر خارجہ سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ ولیم ہیگ اور پاکستانی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کے مابین مذاکرات میں دو طرفہ تعلقات اور سرمایہ کاری کے مزید منصوبوں پر بات چیت ہو گی۔ ولیم ہیگ اسلام آباد کے علاوہ کراچی بھی جائیں گے جہاں وہ مزار قائد پر پھولوں کی چادر بچھائیں گے۔

پاکستانی اور برطانوی وزرائے خارجہ بدھ کے روز ایک مشترکہ اخباری کانفرنس سے بھی خطاب کریں گے۔

اس وقت پاکستان میں ایک سو سے زیادہ برطانوی کمپنیاں کام کر رہی ہیں جبکہ برطانیہ کی جانب سے پاکستان میں دو سو تریسٹھ ملین ڈالر سے زیادہ کے مختلف منصوبے جاری ہیں۔ برطانیہ کے حالیہ انتخابات میں سات پاکستانی نژاد برطانوی پارلیمان کے رکن منتخب ہوئے ہیں۔

پاکستان اور برطانیہ کے مابین تجارت میں بھی اضافہ ہوا ہے جو اس وقت ایک اعشاریہ سات بلین ڈالر ہے جبکہ سن دو ہزار تین دو ہزار چار میں یہ ایک اعشاریہ چار بلین ڈالر تھی۔