وزیرستان: ڈرون حملے میں چار ہلاک

فائل فوٹو، ڈرون حملہ
Image caption سرکاری اعداد و شمار کے مطابق اس سال شمالی وزیرستان میں اڑسٹھ ڈرون حملے ہوچکے ہیں

پاکستان کے قبائلی علاقے شمالی وزیرستان میں حکام کے مطابق امریکی جاسوس طیارے کے ایک مشکوک گاڑی پر حملے کے نتیجے میں چار افراد ہلاک اور تین زخمی ہوگئے ہیں۔

حکام کے مطابق ہلاک ہونے والوں میں دو غیر مُلکی بتائے جاتے ہیں۔

میرانشاہ میں ایک سرکاری اہلکار نے بی بی سی کو بتایا کہ جمعرات کی شام کو شمالی وزیرستان کے تحصیل میرعلی سے کوئی دس کلومیٹر دور جنوب کی جانب خیسورہ کے علاقے میں ایک امریکی جاسوسی طیارے سے ایک گاڑی کو نشانہ بنایا گیا جس کے نتیجے میں چار افراد ہلاک اور تین زخمی ہوگئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ امریکی جاسوس طیارے سے دو میزائل داغے گئے ہیں جس سے گاڑی بھی مکمل طور پر تباہ ہوگئی ہے۔اہلکار کے مطابق ہلاک ہونے والوں میں دو غیر ملکی بتائے جاتے ہیں۔انہوں نے بتایا کہ کسی اہم شخصیت کی ہلاکت کی کوئی تصدیق نہیں کی جاسکتی۔

مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ پچھلےکئی دنوں سے اس علاقے پر ڈرون حملے ہو رہے ہیں۔جس میں زیادہ تر مقامی طالبان ہی ہلاک ہوئے ہیں۔

مقامی لوگوں کے مطابق ڈرون حملوں میں غیر ملکیوں کے علاوہ پنجابی طالبان کی ایک بڑی تعداد نشانہ بنی ہے ۔

نامہ نگار دلاور خان وزیر کے مطابق گزشتہ کئی دنوں سے امریکی جاسوسی طیارے علاقے میں معمول سے ہٹ کر نچلی پروازیں کر رہے ہیں۔اور ایک ہی وقت میں چھ سے آٹھ امریکی جاسوس طیارے فضاء میں موجود ہوتے ہیں۔

ایک مقامی شخص نے بی بی سی کو بتایا کہ حملے کے دوران دو امریکی جاسوس طیاریں بہت نیچے پرواز کرہے تھے۔جب دھماکہ ہوا تو ایک مکان کے قریب سے زبردست دھواں اٹھنے لگا اور قریبی آبادی کو دھواں نے اپنی لپٹ میں لے لیا۔انہوں نے کہا کہ لاشوں میں کوئی بھی قابل شناخت نہیں تھی اور مقامی لوگوں نے لاشوں کو گاڑی سے نکا لیا۔

سرکاری اعداد و شمار کے مطابق اس سال شمالی وزیرستان میں اڑسٹھ ڈرون حملے ہوچکے ہیں اور جنوبی وزیرستان میں چھ ڈرون حملے ہوئے ہیں۔سرکاری اہلکاروں کے مطابق ستمبر کے مہینے میں پچیس اور اکتوبر میں چھ ڈرون حملے ہوئے ہیں۔

اس واقعہ سے ایک دن پہلے بدھ کو شمالی وزیرستان کے صدر مقام میرانشاہ شہر کے اندر درپہ خیل میں ایک کمرے کو نشانہ بنایا تھاجس کے نتیجہ ایک مقامی طالبان کمانڈر زاہد خان اور دو غیر مُلکی ہلاک ہوگئے تھے۔جن کو میرانشاہ کے نوحئی علاقے میں سپرد خاک کردیاگیا۔

اسی بارے میں