آسیہ کے لیے پوپ کی اپیل

پوپ بینیڈکٹ
Image caption پوپ بینیڈکٹ نے کہا ہے کہ پاکستان میں عیسائی برادری کو اکثر تشدد اور امتیازی سلوک کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

عیسائیوں کے مذہبی پیشوا پوپ بینیڈکٹ نے پاکستان پر زور دیا ہے کہ وہ آسیہ بی بی کو رہا کرے جنہیں توھین رسالت کے الزام میں سزائے موت سنائی گئی ہے۔

پوپ بینیڈکٹ نے اپنے ہفتے وار خطاب میں کہا کہ پاکستان میں عیسائی برادری کو اکثر تشدد اور امتیازی سلوک کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

انہوں نے آسیہ بی بی کی رہائی کی اپیل کی جو پانچ بچوں کی ماں ہیں اور جنہیں نومبر میں توھین رسالت کے الزام میں سزائے موت سنائی گئی تھی۔

پوپ بینیڈکٹ نے آسیہ بی بی کے ساتھ اپنی روحانی قربت کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وہ دعا کرتے ہیں کہ اس طرح کے حالات کا سامنا کرنے والے ہر شخص کے انسانی وقار اور بنیادی حقوق کا احترام ہو۔

پاکستانی عیسائی خاتون آسیہ بی بی گزشتہ ڈیڑھ برس سے قید ہیں۔

ان کی سزائے موت کے فیصلے سے پاکستان میں توھین رسالت کے قوانین ایک مرتبہ پھر زیر بحث آ گئے ہیں جن کے بارے میں ناقدین کا کہنا ہے کہ یہ قوانین پاکستان میں اقلیتوں کے خلاف استعمال ہو رہے ہیں۔ ناقدین کا کہنا ہے کہ اکثر یہ قوانین اقلیتی لوگوں کے خلاف ذاتی جھگڑوں میں استعمال ہوتے ہیں۔

اسی بارے میں