پنجاب میں دھند کا راج

Image caption صوبہ پنجاب کے میدانی علاقے ان دنوں گہری دھند کی لپیٹ میں ہیں

پنجاب کے صوبائی دارالحکومت لاہور سمیت صوبے کے میدانی علاقوں میں شدید دھند کی وجہ سے معمولاتِ زندگی بری طرح متاثر ہوئے ہیں۔

لاہور میں شدید دھند کی وجہ سے سنیچر کی رات ہوائی اڈہ کو بھی بند کردیا گیا اور اندرون ملک اور بیرون ملک آنے اور جانے والی پروازیں منسوخ کر دی گئیں۔

دھند کی وجہ سے لاہور اور اسلام آباد کے درمیان موٹر وے کو بھی ہر طرح کی ٹریفک کے لیے بند کر دیا گیا ہے ۔

صوبہ پنجاب کے میدانی علاقے ان دنوں گہری دھند کی لپیٹ میں ہیں اور محکمہ موسمیات کے مطابق گہری دھند کا یہ سلسلہ آئندہ چند دنوں تک جاری رہے گا۔

لاہور سے نامہ نگار عبادالحق کا کہنا ہے کہ قومی ائر لائن پی آئی اے کے ترجمان اطہر حسین کے مطابق گہری دھند کے باعث رات نو بجے کے بعد لاہور کے ہوائی اڈے کو بند کر دیا گیا اور لاہور کے ہوائی اڈے پر اترنے والی پروازوں کو شدید دھند کی وجہ کراچی اور اسلام آباد کے ہوائی اڈے پر اتاراگیا ہے ۔

ترجمان کے بقول اتوار کی صبح جیسے ہی دھند ختم ہوگی تو لاہور کے ہوائی اڈے سے پروازوں کا سلسلہ دوبارہ شروع ہو جائے گا ۔محکمہ سوسمیات کا کہنا ہے کہ اتوار کی صبح نو بجے کے بعد دھند ختم ہونے کا امکان ہے ۔

موٹر وے پولیس کے ترجمان محمد عمران کا کہنا ہے کہ دھند کی اس قدر گہری ہے کہ موٹر وے پر کچھ دکھائی نہیں دے رہا اور اسی وجہ سے گاڑیوں کو موٹر وے پر جانے سے روک دیا گیا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ دھند شروع ہونے سے پہلے جو گاڑیاں موٹر وے سفر کر رہی تھی ان کو دھند کے باعث قافلے کی شکل میں واپس لایا جا رہا ہے جبکہ کچھ گاڑیوں کو قریبی انٹر چینج سے جی ٹی روڈ کی طرف موڑ دیا گیا ہے ۔

ترجمان نے اس امید کا اظہار کیا کہ اتوار کے روز دھند ختم ہونے کے بعد موٹر وے کو دوبارہ کھول دیا جائے گا۔موٹروے پولیس نے لوگوں سے اپیل کی ہے کہ موٹر وے پر غیر ضروری سفر سے گریز کریں۔

دوسری طرف ریلوے حکام کے مطابق دھند کے باعث ریل گاڑیوں کی آمد روفت کا سلسلہ معطل نہیں ہوا البتہ ریل گاڑیاں کی آمد رفت کا شیڈول متاثر ہوسکتا ہے اور دھند کی وجہ سے ریل گاڑیاں تاخیرکا شکار ہوسکتی ہیں ۔

پنجاب کے میدانی علاقوں میں دھند کا سلسلہ دسمبر کے آخری ہفتے میں شروع ہوا ہے اور محکمہ موسمیات کے مطابق دھند کا یہ سلسلہ آئندہ چند روز تک جاری رہے گا۔

اسی بارے میں