’فوجی صلاحیتوں کو بہتر بنایا جارہا ہے‘

تصویر کے کاپی رائٹ
Image caption فوج ملک کے دفاع کے لیے کسی قربانی سے دریغ نہیں کرے گی: جنرل کیانی

پاکستان کی بری فوج کے سربراہ جنرل اشفاق پرویز کیانی کا کہنا ہے کہ مغربی سرحد پر کسی بھی ممکنہ جارحیت کا جواب دینے کے لیے فوجی صلاحیتوں کو مزید بہتر بنایا جارہا ہے۔

یہ بات انہوں نے جمعہ کو اسلام آباد میں وزیرِ اعظم سید یوسف رضا گیلانی سے ملاقات کے دوران کہی۔

دونوں رہنماؤں نے چھبیس نومبر کو پاکستان کے قبائلی علاقے مہمند ایجنسی میں پاک افغان سرحد کے قریب سلالہ کے علاقے میں دو پاکستانی چوکیوں پر نیٹو فائرنگ سے چوبیس سکیورٹی اہلکاروں کی ہلاکت کے بعد پیدا ہونے والی صورتِ حال پر بات چیت کی۔

جنرل اشفاق پرویز کیانی نے یوسف رضا گیلانی کو پاکستان کی سر زمین پر کسی بھی مداخلت کی صورت میں جوابی کارروائی کے لیے دفاعی صلاحتیوں کو مزید بہتر بنانے کے اقدامات کے بارے میں بتایا۔

اس موقعہ پر وزیرِاعظم یوسف رضا گیلانی کا کہنا تھا کہ جمہوری حکومت کسی کو ملک کی سلامتی کی خلاف ورزی کرنے کی اجازت نہیں دے گی اور ہر طرح کی جارحیت کا بھر پور جواب دیا جائے گا۔

وزیرِ اعظم نے کہا کہ حکومت ملک کے دفاع کے لیے مسلح افواج کو ہر ممکن سہولیات فراہم کرے گی۔

بری فوج کے سربراہ نے وزیرِاعظم کا شکریہ ادا کرتے ہوئے اس عزم کا اعادہ کیا کہ فوج ملک کے دفاع کے لیے کسی قربانی سے دریغ نہیں کرے گی۔

اسی بارے میں