بی بی سی نیوز ایوارڈز 2012 کا اعلان

اسامہ کارروائی تصویر کے کاپی رائٹ reu
Image caption امریکی ہیلی کاپٹر اسامہ کے مکان کے احاطے میں گرا تھا

بی بی سی نے نیوز ایوارڈ 2012 کا اعلان کیا ہے جس میں مختلف کیٹیگریز میں اعلیٰ صحافتی اقدار کے لیے ایوارڈز دیے گئے ہیں۔

گلوبل نیوز کی کیٹیگری میں مغربی اور وسطی ایشیاء کے خطے میں بہترین رپورٹنگ کے لیے اردو سروس کے ذوالفقار علی، جنوبی ایشیا سے فارسی سروس کے محمد اسماعیل اور افریقہ کیٹیگری میں رانا جواد کو ایوارڈز دیے گئے۔

ذوالفقار علی کو گزشتہ سال مئی میں ایبٹ آباد میں امریکی ہیلی کاپٹر کے تباہ ہونے کی خبر بریک کرنے پر ایوارڈ دیا گیا۔

انہوں نے سب سے پہلے بی بی سی اردو کو خبر دی تھی کہ ایبٹ آباد میں ایک امریکی ہیلی کاپٹر کے گرنے کی اطلاع ہے۔ بعد میں پتہ چلا کہ وہ ہیلی کاپٹر دنیا میں سب سے زیادہ مطلوب شخص اسامہ بن لادن کے ایبٹ آباد میں ایک کمپاؤنڈ پر امریکی کارروائی کے دوران استعمال کیا گیا تھا۔

یہ خبر دنیا کی سب سے بڑی خبر بن گئی کہ اسامہ بن لادن کو ایبٹ آباد میں ایک امریکی فوجی کارروائی میں ہلاک کر دیا گیا۔

بی بی سی کی ڈائریکٹر نیوز ہیلن باؤڈن نے ذوالفقار علی کے کام کی تعریف کرتے ہوئے اپنے پیغام میں کہا: ’آپ نے نیوز میں ایک نمایاں معاونت کی ہے اور یہ ایوارڈ اس بات کا ایک بڑا ثبوت ہے کہ آپ کے رفقاء آپ کے کام کو کس قدر سے دیکھتے ہیں۔‘

Image caption ’یہ بالکل ایسا ہے جیسے کوئی خواب سچا ہوگیا ہو۔ میں یہ ایوارڈ بی بی سی اور بی بی سی کے ساتھیوں کے نام کرتا ہوں‘

ایوارڈ جیتنے کے بعد ذوالفقار علی کا کہنا تھا کہ یہ ان کے اور ان کے ساتھیوں کے لیے اہم دن ہے۔

’یہ بالکل ایسا ہے جیسے کوئی خواب سچا ہوگیا ہو۔ میں یہ ایوارڈ بی بی سی اور بی بی سی کے ساتھیوں کے نام کرتا ہوں۔‘

ذوالفقار علی ایک دہائی سے زیادہ عرصے سے بی بی سی سے منسلک ہیں اور ایک عرصے تک پاکستان کے زیرِ انتظام کشمیر سے رپورٹنگ کرتے رہے ہیں۔

سنہ دو ہزار پانچ میں آنے والے زلزلے کے دوران، جس میں پاکستان کے زیرِ انتظام کشمیر کے دارالحکومت مظفر آباد کو بہت نقصان پہنچا تھا، ذوالفقار علی کے کام کو بہت سراہا گیا تھا۔

اسی بارے میں