’مسلم لیگ نون ایک انقلابی تبدیلی لائے گی‘

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service

پاکستان مسلم لیگ نون کے صدر اور سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف نے کہا ہے کہ ان کی جماعت ایک انقلابی تبدیلی لائے گی جبکہ تبدیلی کا محض نعرہ لگانے والے اب آہستہ آہستہ غائب ہوتے جا رہے ہیں۔ یہ بات انہوں نے لاہور میں مسلم لیگ نون کی صوبائی جنرل کونسل کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔

مسلم لیگ نون کے صدر نواز شریف نے کہا کہ ان کی جماعت ایک انقلابی پروگرام ترتیب دے رہی ہے اور وہ حکومت میں آتے ہی اس ایجنڈے کو نافذ کر کے ملک کی تقدیر بدل دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں اگر صاف ستھری سیاست ہوگی تو لوگوں کے گھروں میں خوشحالی آنا شروع ہوجائے گی البتہ انہوں نے کہا کہ تبدیلی آنے میں ابھی تھوڑا وقت باقی ہے۔

صوبائی جنرل کونسل کے اجلاس میں نواز شریف کے چھوٹے بھائی اور پنجاب کے وزیراعلٰی شہباز شریف کو بلامقابلہ صدر منتخب کر لیا گیا۔ ان کے مقابلے میں کسی نے کاغذات جمع ہی نہیں کرائے۔ نائب صدر چودھری جعفر اقبال کو منتخب کیا گیا جبکہ باقی عہدوں پر تعیناتی کے اختیارات وزیر اعلٰی شہباز شریف کو ہی دے دیئے گئے۔

نواز شریف نے اپنے خطاب میں انہیں مبارکباد کہا۔ نواز شریف نے کہا کہ ڈھائی ڈھائی سال میں حکومتوں کا خاتمہ کرکے ترقی کا تسلسل جاری نہیں رہنے دیا گیا۔ ان کا کہنا تھا کہ اگر جمہوریت کو بار بار پٹری سے نہ اتارا جاتا تو آج حالات بہت بہتر ہوتے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان میں منافقت کی سیاست کا خاتمہ کرنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ یہ کیا گندی سیاست ہے کہ جو لوگ پرویز مشرف کو بیس بیس بار صدر بنانے کا دعوی کرتے تھے اب وہ اس حکومت کا حصہ ہیں جو پرویز مشرف کے ریڈ وارنٹ جاری کررہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ جو لوگ پیپلز پارٹی کو خونی دشمن کہتے تھے آج انہی کی گود میں بیٹھے ہیں۔

اسی بارے میں