کراچی: احمدی رہنماء سمیت پانچ ہلاک

آخری وقت اشاعت:  جمعـء 20 جولائ 2012 ,‭ 22:22 GMT 03:22 PST
کراچی میں پولیس(فائل فوٹو)

ابتدائی حالات سے لگتا کہ قتل مذہبی منافرت کی بجائے شاید لسانی بنیادوں کیا گیا، لیکن پولیس حتمی طور پر کوئی بھی بات تفتیش مکمل ہونے کے بعد ہی کرسکے گی: پولیس

پاکستان کے سب سے بڑے شہر کراچی میں احمدی جماعت کے مقامی رہنماء کو گھر کے باہر گولی مار کر ہلاک کردیا گیا، دیگر واقعات میں ایک مبینہ ڈاکو سمیت چار مزید افراد بھی مارے گئے۔

کراچی پولیس کے ڈی آئی جی ویسٹ نعیم احمد بروکا نے بی بی سی کے رابطہ کرنے پر تصدیق کی کہ نامعلوم مسلح افراد نے احمدی جماعت کے رکن کو قتل کر دیا ہے۔

شہر کے غربی علاقے میں پولیس کے سربراہ کا کہنا تھا کہ نعیم احمد گوندل اسٹیٹ بینک میں اسسٹنٹ وائس پریذیڈینٹ (اے وی پی) کے عہدے پر فائز تھے اور آج صبح اورنگی ٹاؤن میں واقع اپنے گھر سے نکل کر دفتر جا رہے تھے کہ ایک موٹر سائیکل پر سوار دو نامعلوم مسلح افراد نے انہیں قریب سے سر پر گولی مار کر ہلاک کر دیا۔ انہوں نے موقع پر ہی دم توڑ دیا۔

چناب نگر ربوہ سے جاری ہونے والے احمدی جماعت کے ایک اعلامیے کے مطابق نعیم احمد گوندل اورنگی ٹاؤن میں جماعت احمدیہ کے صدر تھے۔ جماعت کے مطابق وہ رواں برس یعنی دو ہزار بارہ میں قتل کیے جانے والے ساتویں احمدی تھے۔ جماعت نے دعویٰ کیا کہ یہ قتل عقیدے کی بنیاد پر کیا گیا۔

جماعت کا کہنا ہے کہ ان کی کسی سے ذاتی دشمنی نہیں تھی وہ علاقے کی ایک نیک نام شخصیت تھے اور علاقے میں کچھ عرصے قبل احمدی جماعت کے خلاف دیواروں پر نعرے لکھے گئے تھے۔

لیکن ڈی آئی جی ویسٹ نعیم احمد بروکا کا کہنا ہے کہ انہیں کافی عرصے سے دھمکیاں مل رہی تھیں۔ مگر ان سمیت کسی نے بھی پولیس کو ان دھمکیوں کے بارے میں مطلع نہیں کیا تھا۔

"ن کی کسی سے ذاتی دشمنی نہیں تھی وہ علاقے کی ایک نیک نام شخصیت تھے اور علاقے میں کچھ عرصے قبل احمدی جماعت کے خلاف دیواروں پر نعرے لکھے گئے تھے"

جماعت احمدیہ

بی بی سی کے نامہ نگار جعفر رضوی نے بتایاکہ پولیس افسر کے مطابق علاقے میں کسی مسجد کے بارے میں تنازعہ تو تھا مگر ابتدائی حالات سے ایسا لگتا کہ یہ قتل مذہبی منافرت کی بجائے شاید لسانی بنیادوں کیا گیا ہے، لیکن پولیس حتمی طور پر کوئی بھی بات تفتیش مکمل ہونے کے بعد ہی کرسکے گی۔

ادھر شہر کے شرقی لانڈھی میں ایک مبینہ ڈاکو اس وقت مارا گیا جب دوران واردات شہریوں نے مزاحمت کی اور لوٹ مار کے دوران ہلاک ہونے والے کو اسی کے ہتھیار سے قتل کردیا۔

شہر کے غربی علاقے میں سائیٹ تھانے کی حدود میں ایک نامعلوم شخص کی لاش ملی جسے گولی مار کر ہلاک کیا گیا۔

شہر کے وسطی علاقے گارڈن سے بھی ایک نامعلوم شخص کی ہاتھ پاؤں بندھی لاش ملی ہے اور غربی علاقے میٹروول میں بھی ایک شخص کو گولی مار کر قتل کردیا گیا۔

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔