سندھ ہائی کورٹ سے ملک ریاض کی ضمانت منظور

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption ملک ریاض اور چیف جسٹس افتخار محمد چودھری کے بیٹے ارسلان افتخار میں پیسے کے لین دین پر جھگڑا چل رہا ہے

سندھ ہائی کورٹ نے بحریہ ٹاؤن کے مالک ملک ریاض کی دس لاکھ روپے کے عوض عبوری ضمانت منظور کرلی ہے۔

ملک ریاض نے راولپنڈی میں قائم انسداد بدعنوانی کی ایک عدالت سے اپنے خلاف ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری ہونے کے بعد سندھ ہائی کورٹ میں ضمانت کی درخواست دائر کر رکھی تھی۔

جمعرات کے روز جسٹس فاروق علی چنّہ پر مشتمل سندھ ہائی کورٹ کی بنچ نے ملک ریاض کی دس لاکھ روپے کی یہ ضمانت منظور کرلی۔

ملک ریاض پر الزام ہے کہ انہوں نے پٹواریوں کے ساتھ ساز باز کرکے گیارہ سو چار ایکڑ اراضی تجارتی ادارے بحریہ ٹاؤن کے لئے خریدی تھی۔ دو ہزار نو میں درج ہونے والے اس مقدمے میں اکتوبر دو ہزار گیارہ میں تحقیقات کے نتیجے میں سولہ ملزمان کی نشاندہی کی گئی ہے۔

دو روز قبل راولپنڈی کی عدالت سے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری ہونے پر ملک ریاض کے وکلاء نے سندھ ہائی کورٹ میں درخواست ضمانت دائر کی تھی جسے آج سندھ ہائی کورٹ نے منظور کرلیا۔