پی پی جلسے پر فائرنگ کا مشتبہ شخص ہلاک

آخری وقت اشاعت:  منگل 30 اکتوبر 2012 ,‭ 10:58 GMT 15:58 PST
پاکستان کی پولیس

پاکستان کی جانب سے مشتبہ شخص کی ہلاکت پر سوال اٹھ رہے ہیں

صوبہ سندھ کے شہر سکھر میں وہ مشتبہ ملزم پولیس فائرنگ کے نتیجے میں ہلاک ہوگیا ہے جس پر خیرپور میں پاکستان پیپلز پارٹی کے جلسے میں فائرنگ کا الزام تھا۔

پیپلز پارٹی کے جلسے میں فائرنگ میں چھ افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

ہلاک ہونے والے شخص عزیز اللہ جانوری پر خیرپور میں پاکستان پیپلز پارٹی کے جلسے میں فائرنگ کا الزام تھا۔

بی بی سی کے نامہ نگار ریاض سہیل کے مطابق باگڑجی پولیس کا کہنا ہے کہ صبح کو نامعلوم مسلح افراد نے تھانے پر حملہ کیا، جس کے بعد ملزم عزیز اللہ جانوری نے فرار ہونے کی کوشش کی لیکن پولیس کی فائرنگ میں وہ ہلاک ہوگیا۔

مقامی صحافیوں کا کہنا ہے کہ پولیس کاموقف مبہم ہے کہ ملزم کیسے لاک اپ کے اندر سے نکلا اور حملہ آوروں میں کوئی زخمی یا ہلاک کیوں نہیں ہوا جس کی تفصیلات پولیس نے بیان نہیں کی۔

یاد رہے کہ سات اکتوبر کو خیرپور کے قریب حکمران جماعت پاکستان پیپلز پارٹی کی جانب سے ایک جلسہ منعقد کیا گیا تھا، جس سے وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ کی بیٹی نفیسہ شاہ کو خطاب کرنا تھا۔

اس جلسے میں فائرنگ سے ایک صحافی سمیت چھ افراد ہلاک ہوگئے تھے جن میں ایک شیعہ عالم کا فرزند بھی شامل تھا۔

پاکستان پیپلز پارٹی نے اسے مخالفین کا حملہ قرار دیا تھا، جبکہ شیعہ عالم کا کہنا تھا کہ یہ فرقہ وارانہ شدت پسندی کا نتیجہ ہے۔

خیرپور پولیس نے اس واقعے میں عزیز اللہ جانوری عرف کفن کو اس واقعے میں ملوث قرار دیا تھا، جسے بعد میں پنجاب کے شہر بہاولپور سے گرفتار کیا گیا تھا۔

صوبائی حکومت نے ملزم کی گرفتاری پر پچیس لاکھ روپے انعام کا اعلان بھی کردیا تھا جس نوعیت کے فوری اقدامات کی مثال کم ہی ملتی ہے۔

گرفتاری کے بعد ملزم کو سکھر منتقل کردیا گیا تھا جہاں اس سے جوائنٹ انٹروگیشن جاری تھی۔

عزیز اللہ جانوری پیشے کے اعتبار سے پلمبر کا کام کرتے تھے۔

پولیس کے رکارڈ کے مطابق ان پر چھوٹے جرائم کے چند مقدمات دائر تھے، جن میں وہ ضمانت پر رہا ہوئے تھے۔

عزیز جانوری کا تعلق علامہ علی شیر حیدری کی برداری سے تھا جو کالعدم سپاہ صحابہ کے مرکزی رہنما تھے۔

اسی بارے میں

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔