کراچی: امام بارگاہ کے قریب دھماکہ، دو ہلاک

آخری وقت اشاعت:  اتوار 18 نومبر 2012 ,‭ 18:31 GMT 23:31 PST
کراچی: فائل فوٹو

گزشتہ چند ماہ سے کراچی میں تشدد کے واقعات میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے

پاکستان کے شہر کراچی کے علاقے عباس ٹاؤن میں ایک امام بارگاہ کے قریب ایک دھماکے میں کم از کم دو افراد ہلاک جبکہ پچیس کے قریب زخمی ہو گئے ہیں۔ زخمی ہونے والوں میں عورتیں اور بچے بھی شامل ہیں۔

پاکستان رینجرز سندھ کے ترجمان میجر سبطین رضوی نے بی بی سی سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ یہ دھماکہ ایک دودھ کی دوکان کے قریب موٹر سائیکل پر نصب بم کی وجہ سے ہوا۔

انہوں نے کہا دھماکے میں رینجرز کے پانچ اہلکار زخمی ہوئے ہیں، جن میں چار کو رینجرز ہسپتال اور ایک کو عباسی شہید ہسپتال لے جایا گیا ہے۔

سرکاری ٹی وی چینل کے مطابق دھماکے کے باعث علاقے کی بجلی بھی معطل ہوگئی ہے۔

دیگر زخمیوں کو پٹیل ہسپتال منقل کیا جا رہا ہے۔

یاد رہے کہ سات نومبر کو بھی کراچی میں نامعلوم افراد نے فائرنگ کر کے شیعہ رہنما علامہ آفتاب حیدر اور ان کے ایک ساتھی کو قتل کر دیا تھا جس کے بعد شہر میں تشدد کے واقعات میں اضافہ ہو گیا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔