خیبر: بمباری میں سات افراد ہلاک

آخری وقت اشاعت:  بدھ 30 جنوری 2013 ,‭ 16:46 GMT 21:46 PST
خیبر

خیبر ایجنسی میں تین روز سے سیکیورٹی اہلکاروں نے کارروائی شروع کر رکھی ہیں

پاکستان کے قبائلی علاقے خیبر ایجنسی میں تیراہ کے مقام پر سیکیورٹی اہلکاروں نے شدت پسندوں کے ٹھکانوں پر بمباری کی ہے جس میں آج سات افراد کے ہلاک ہونے کی اطلاع ہے ۔

خیبر ایجنسی میں شدت پسند تنظیموں کی جھڑپوں کے بعد تین روز سے سیکیورٹی اہلکاروں نے کارروائی شروع کر رکھی ہیں۔

حکام کے مطابق آج صبح دو جیٹ طیاروں نے تیراہ میں سر قمر کے مقام پر شدت پسندوں کے ٹھکانوں پر بمباری کی ہے ۔ مقامی لوگوں کے مطابق اس کارروائی میں سات افراد ہلاک ہوئے ہیں لیکن سیکیورٹی اہلکاروں نے ہلاکتوں کی تعداد کے بارے میں وضاحت نہیں کی ہے۔

وادی تیراہ خیبر ایجنسی کا دور افتادہ علاقہ ہے جس کے ایک جانب اروکزئی ایجنسی، کوہاٹ اور درہ آدم خیل کے علاقے ملتے ہیں۔

تیراہ میں گزشتہ تین روز سے سیکیورٹی اہلکاروں نے متعدد مقامات پر حملے کیے ہیں جس میں کم سے کم بیس افراد کے ہلاک ہونے کی اطلاع ہے۔ ایسی اطلاعات ہیں کہ ہلاکتوں کی تعداد زیادہ ہے لیکن اس کی تصدیق نہیں ہو سکی۔

خیبر ایجنسی کے مختلف مقامات پر شدت پسند تنظیمیں متحرک ہیں اورگزشتہ ایک ہفتے سے تیراہ کے مقام پر انصار الاسلام اور تحریک طالبان کے مابین متعدد جھڑپیں ہوئی ہیں جس میں بڑی تعداد میں ہلاکتوں کی اطلاعات موصول ہوئی تھیں۔

سرکاری سطح پر تیراہ میں ہلاکتوں کی کوئی باقاعدہ تصدیق نہیں کی جا سکی۔ عام طور پر خیبر ایجنسی سے زخمیوں کو پشاور کے حیات آباد میڈیکل کمپلیکس لایا جاتا ہے لیکن ان جھڑپوں کے دوران کوئی زخمی اس ہسپتال میں نہیں لایا گیا ہے۔

حکام کے مطابق تیراہ میں سرکاری اہلکار موجود نہیں ہیں اس لیے ایک تو وہاں سے اطلاعات تاخیر سے موصول ہوتی ہیں اور ان کی باقاعدہ تصدیق نہیں کی جا سکتی۔

انصار الاسلام اور تحریک طالبان کے درمیان ایک امن معاہدہ قائم کیا گیا تھا لیکن حالیہ جھڑپوں کے بعد یہ معاہدہ اب نہیں رہا جبکہ اسی علاقے میں لشکر اسلام نامی تنظیم اور انصار الاسلام کے درمیان بھی ماضی میں جھڑپیں ہو سکی ہیں جس میں دونوں جانب سے جانی نقصانات ہوئے ہیں۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔