نیا صوبہ: سینیٹ میں آئینی ترمیم کی منظوری

آخری وقت اشاعت:  بدھ 6 مارچ 2013 ,‭ 16:17 GMT 21:17 PST
پاکستان سینیٹ فائل فوٹو

چوبیسویں آئینی ترمیم کا بِل وزیر قانون فاروق ایچ نائیک نے سینیٹ میں پیش کیا

پاکستان کے ایوانِ بالا یعنی سینیٹ نے ملک میں ایک نئے صوبے ’بہاولپور جنوبی پنجاب‘ کی تشکیل کے لیے چوبیسویں آئینی ترمیم کی منظوری دے دی ہے۔

یہ آئینی ترمیم بدھ کی شام سینیٹ کے اجلاس میں منظور کی گئی اور 70 ارکان نے اس کی حمایت کی۔

چوبیسویں آئینی ترمیم کا بِل وزیر قانون فاروق ایچ نائیک نے سینیٹ میں پیش کیا۔

ریڈیو پاکستان کے مطابق ووٹنگ کے موقع پر دیگر اپوزیشن جماعتوں مسلم لیگ نون، فنکشنل لیگ اور نیشنل پارٹی نے ووٹنگ کا بائیکاٹ کیا اور ایوان سے واک آؤٹ کیا جبکہ جمیعت علمائے اسلام کے سینیٹر اس موقع پر ایوان سے غیرحاضر تھے۔

فاروق نائیک نے سینیٹ کے ارکان کو اس بِل کی منظوری پر مبارکباد دیتے ہوئے امید ظاہر کی کہ یہ اقدام جنوبی پنجاب کے افراد کی محرومیوں کا ازالہ کر پائے گا اور ان کی ترقی میں معاون ثابت ہو گا۔

سینیٹ سے منظوری کے بعد اس بِل کو اب قومی اسمبلی میں پیش کیا جائے گا۔

حال ہی میں حکومت کا ساتھ چھوڑنے والی متحدہ قومی موومنٹ نے بھی اس ترمیم کے حق میں ووٹ دیا۔

"حال ہی میں حکومت کا ساتھ چھوڑنے والی متحدہ قومی موومنٹ نے بھی اس ترمیم کے حق میں ووٹ دیا"

اس سے پہلے سینیٹر فرحت اللہ بابر نے کہا کہ پیپلز پارٹی کی حکومت نے سنہ دو ہزار آٹھ کے انتخابات کے بعد جنوبی پنجاب کو نمائندگی دینے کے لیے جنوبی پنجاب سے وزیر اعظم منتخب کرنے کا فیصلہ کیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ نئے صوبے کے قیام کے بعد پیدا ہونے والی کسی بھی مسئلے کو مشترکہ مفادات کی کونسل میں پیش کیا جا سکتا ہے۔

ادھر مسلم لیگ نون کے رہنما اسحاق ڈار نے کہا ہے کہ پنجاب اسمبلی نے گزشتہ برس ایک قرار داد کے ذریعے پارلیمانی کمیشن کی نئے صوبوں کی تخلیق سے متعلق قرار داد پر عدم اعتماد کا اظہار کیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ اگر ملک میں نئے صوبے بنانے ہیں تو ہمیں اس کے لیے باقاعدہ مکینزم اپنانا ہو گا۔

میر حاصل خان بزنجو کا کہنا تھا کہ ملک میں نئے صوبوں کے قیام کے حوالے سے کوئی بھی سنجیدہ نہیں ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔