ایل او سی: ’فوجی کی لاش پاکستان کے سپرد‘

آخری وقت اشاعت:  منگل 12 مارچ 2013 ,‭ 16:17 GMT 21:17 PST

پاکستان کے زیر انتظام کشمیر میں پولیس حکام کا کہنا ہے کہ بھارتی حکام نے اس پاکستانی فوجی کی لاش ان کے سپرد کردی جو دریا میں گر کر لاپتہ ہوگیا تھا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ یہ پاکستانی فوجی رات کی ڈیوٹی پر تھا جب وہ وادی نیلم میں فلاکاں کے مقام پر ’دریا میں گر کر لاپتہ ہوگیا تھا‘۔

حکام کا کہنا ہے کہ ابتدائی دنوں میں ان کو تلاش کرنے کی کوشش کی گئی مگر کوئی سراغ نہ ملنے پر یہ کوشش ترک کردی گئی۔

انھوں نے کہا کہ پیر کو بھارتی فوجیوں نے لائن آف کنٹرول کے دوسری جانب ٹیٹوال کے مقام پر دریا کے کنارے ایک نامعلوم شخص کی لاش پڑی ہوئی دیکھی جس کی شناخت کے لیے انھوں نے پاکستانی فوجی حکام سے رابط کیا۔

ان کا کہنا ہے کہ منگل کو پاکستانی فوجی اور سول حکام نے ٹیٹوال کے مقام پر وادی نیلم کو وادی کشمیر کے ساتھ ملانے والے پل پر لاش کی شناخت کی جس کے بعد بھارتی حکام نے لاش ان کے حوالے کردی۔

پولیس حکام کے مطابق اس موقع پر بھارتی فوجی افسر بھی موجود تھے۔

لیکن ابھی تک یہ واضح نہیں ہے کہ پاکستانی فوجی کن حالات میں اور کیسے دریائے نیلم میں گرا۔

یاد رہے کہ پندرہ فروری کو بھارتی فوجی حکام نے اس پاکستان فوجی کی لاش پاکستان کو واپس کردی تھی جو لائن آف کنٹرول عبور کرتے ہوئے بھارتی فوج کی فائرنگ سے ہلاک ہوگیا تھا۔

پاکستانی فوج کا کہنا تھا کہ اس نے غلطی سے لائن آف کنٹرول عبور کی تھی لیکن بھارت کی فوج کا کہنا تھا کہ پاکستانی فوجی نے ان پر فائرنگ کی تھی اور وہ جوابی فائرنگ میں ہلاک ہوگیا تھا۔

لائن آف کنٹرول پر ہندوستان اور پاکستان کے فوجوں کے درمیان حالیہ جھڑپوں اور گولہ باری کے تبادلے کے نتیجے میں کشیدگی ہے۔ ان جھڑپوں میں چار پاکستانی اور دو بھارتی فوجی ہلاک ہوگئے تھے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔