کراچی میں دھماکے سے تین افراد ہلاک

آخری وقت اشاعت:  جمعـء 15 مارچ 2013 ,‭ 02:24 GMT 07:24 PST

پولیس نے جمعرات کو ہی عباس ٹاؤن بم دھماکے میں ملوث ملزمان کو گرفتار کرنے کا دعویٰ کیا تھا

پاکستان کے سب سے بڑے شہر کراچی کے علاقے لانڈھی کی مظفر کالونی میں ایک دھماکے سے تین افراد ہلاک ہو گئے۔

پاکستان کے سرکاری ٹیلی ویژن پی ٹی وی کے مطابق دھماکے کے نتیجے میں تین افراد ہلاک اور تین زخمی ہو گئے ہیں۔

ایس ایس پی راجہ عمر خطاب کے مطابق دھماکے میں دو کلوگرام دھماکہ خیز مواد استعمال کیا گیا۔

پولیس کے مطابق دھماکے کا ہدف ایک مقامی کیبل آپریٹر تھا۔

پولیس نے علاقے کو گھیرے میں لے کر امدادی کارروائیاں شروع کر دی ہیں۔

فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی نے پولیس افسر نعیم بروکا کے حوالے سے بتایا کہ کسی نے دھماکہ خیز مواد سے بھرا بیگ کیبل آپریٹر کے دفتر کے سامنے رکھ دیا تھا اور اسے بعد میں ریموٹ کنٹرول کے ذریعے دھماکہ کیا۔

دھماکہ ایک ایسے وقت ہوا ہے جب جمعرات کو پولیس نے رواں ماہ عباس ٹاؤن میں ہونے والے بم دھماکے میں ملوث ملزمان کو گرفتار کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

اس کے علاوہ مقامی میڈیا کے مطابق کراچی پولیس نے سماجی کارکن پروین رحمان کے قتل میں ملوث ایک مبینہ شدت پسند کو پولیس مقابلے میں ہلاک کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

عباس ٹاؤن کے قریب بم دھماکے میں اڑتالیس افراد ہلاک اور سو سے زائد زخمی ہوگئے تھے، ہلاک ہونے والوں میں سترہ کا تعلق شیعہ کمیونٹی سے تھا۔دھماکے کے نتیجے میں ستر فلیٹ رہائش کے قابل نہیں رہے تھے۔اس واقعے کے خلاف ملک بھر میں احتجاج کیا گیا تھا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔