افغان امن مذاکرات کی حمایت کرتے ہیں: نواز شریف

Image caption پاکستان میں نئی حکومت کے قیام کے بعد ڈیوڈ کیمرون پہلے وزیراعظم ہیں جنہوں نے پاکستان کا دورہ کیا ہے

برطانیہ کے وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون کہنا ہے کہ پاکستان اور برطانیہ کو دہشت گردی کا سامنا ہے اور دہشت گردی اور شدت پسندی کے خاتمے کے لیے وہ پاکستان کے مل کر کام کرنا چاہتے ہیں۔

برطانیہ کے وزیراعظم نے اسلام آباد میں اپنے ہم منصب وزیراعظم نواز شریف سے ملاقات کے بعد مشترکہ پریس کانفرنس کی۔

انھوں نے کہا کہ برطانیہ کے دوست پاکستان کے دوست ہیں برطانیہ کے دشمن پاکستان کے دشمن ہیں۔

اس موقع پر پاکستان کے وزیراعظم نے کہا کہ بین الاقوامی معاملات پر دونوں ملکوں کا موقف یکساں ہے۔ انھوں نے کہا کہ دہشت گردی مشترکہ مسئلے ہے اور اسے نئے عزم کے ساتھ حل کریں گے۔

وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون نے کہا کہ مستحکم افغانستان پاکستان کے حق میں ہے۔

اس موقع پر پاکستان کے وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان افغان امن مذاکرات میں پیش رفت چاہتا ہے تاکہ پاکستان میں موجود تیس لاکھ افغان مہاجرین اپنے ملک واپس جا سکیں۔

وزیرا عظم کیمروں نے کہا دونوں ممالک کے درمیاں مضبوط روابط ہیں اور برطانیہ میں موجود دس لاکھ سے زیادہ پاکستانی دونوں ملکوں کے تعلقات میں پل کا کردار ادا کر سکتے ہیں۔

انھوں نے کہا کہ وہ پاکستان کے ساتھ سرمایہ کاری اور تجارتی تعلقات کو فروغ دینا چاہتے ہیں۔ برطانوی وزیراعظم نے کہا جلد لاہور اور کراچی میں برٹش کونسل دوبارہ کھول دی جائے گی۔

نواز شریف نے برطانوی تاجروں کو پاکستان میں سرمایہ کارے کرنے کی دعوت دی۔

اس سے قبل اسلام آباد میں دونوں رہنماؤں نے ون ٹو ون ملاقات میں دو طرفہ تعاون اور خطے کے صورتحال پر تبادلہ خیال کیا ۔ جس کے بعد وفود کی سطح پر بات چیت مذاکرات ہوئے۔

وزیراعظم کے ساتھ بات چیت میں وفاقی وزراء اور مشیر بھی شامل ہیں۔

برطانیہ کے وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون پاکستان کے دور روزہ دورے پر سنیچر پاکستان پہنچے تھے۔گزشتہ روز برطانوی وزیراعظم نے پاکستان کے صدر آصف علی زرداری سے ملاقات کی تھی۔

ملاقات کے دوران صدر زرداری کا کہنا تھا کہ پاکستان افغانستان میں امن و استحکام کا حامی ہے اور افغانستان میں دیر پا امن قائم کرنے کے لیے ہر ممکن کوشش جاری رکھے گا۔ صدارتی ترجمان فرحت اللہ بابر کے مطابق ملاقات میں وزیراغظم کیمرون نے پاکستانی صدر کو جمہوری انتقالِ اقتدار پر مبارکباد دی۔

برطانوی وزیرِاعظم اس دورے پر اپنے ہم منصب میاں نواز شریف کے علاوہ کاروباری برادری سے بھی ملاقاتیں کریں گے۔

اپنے دورے کے پہلے مرحلے میں برطانوی وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون افغانستان گئے تھے۔

اسی بارے میں