خطے کے مقدر کا فیصلہ پاکستان کے بغیر نہیں: نواز شریف

Image caption سلامتی کے موضوع پر قوم کو اعتماد میں لوں گا: نواز شریف

اسلام آباد کے کنونشن سنٹر میں پاکستان کے 66ویں یومِ آزادی کے موقعے پر پرچم کشائی کے بعد قوم سے خطاب میں پاکستان کے وزیرِاعظم نواز شریف نے کہا کہ خطے کے مقدر کا فیصلہ پاکستان کے بغیر نہیں ہو سکتا۔

اس تقریب کے مہمانِ خصوصی پاکستان کے دورے پر آئے ہوئے اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل بان کی مون تھے۔

انھوں نے کہا کہ پاکستان جنوبی ایشیا کی اہم قوت ہے اور اس کا اعتراف عالمی سطح پر کیا جا رہا ہے۔

نواز شریف نے کہا کہ گوادر پورٹ پورے خطے کا معاشی مستقبل بدل کر رکھ دے گی اور امید ظاہر کی کہ پاکستان اس خطے کا اہم مرکز ہو گا۔

پاکستانی وزیرِ اعظم نے کہا کہ انھیں عوام میں پائی جانے والی بے چینی کا نہ صرف احساس ہے بلکہ ملال ہے۔ قوموں کی زندگی میں ایسے واقعات آتے ہیں اور پاکستانی قوم یک جہتی سے ان حالات کا مقابلہ کر رہی ہے۔

انھوں نے یقین ظاہر کیا کہ قوم افواج کے تعاون سے نہ صرف دہشت گردی پر قابو پائیں گے۔

نواز شریف نے اس موقعے پر انگریزی میں بات کرتے ہوئے کہا کہ ہم دنیا بھر کے امن اور سلامتی کے مثبت کردار ادا کرتے رہیں گے۔

انھوں نے کہا کہ وہ سلامتی کے موضوع پر اگلے چند روز میں قوم کو اعتماد میں لیں گے۔

اسی بارے میں