کوئٹہ:پولیس تھانے کے باہر دھماکہ، 5 افراد ہلاک

Image caption بیس سے زیادہ زخمیوں کو ہسپتال منتقل کیا گیا

پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ میں ایک دھماکے میں پانچ افراد ہلاک اور 35 سے زیادہ زخمی ہوگئے ہیں۔

کوئٹہ کے کمشنر عثمان گل کے مطابق یہ دھماکہ شہر کے مصروف لیاقت بازار میں واقع سٹی پولیس سٹیشن کے سامنے ہوا۔

ان کے مطابق بم سائیکل پر نصب تھا اور بظاہر اس کا نشانہ پولیس سٹیشن ہی تھا۔

کوئٹہ کے کمشنر کا کہنا ہے کہ اس دھماکے میں ہلاک ہونے والے پانچ افراد میں پولیس کا ایک اہلکار اور ایک 13 سالہ بچہ بھی شامل ہے جب کہ کل 37 زخمیوں کو ہسپتال منتقل کیا گیا ہے۔

نامہ نگار محمد کاظم کے مطابق بم ڈسپوزل سکواڈ کا کہنا ہے کہ اس دھماکے میں پانچ سے چھ کلو بارودی مواد استعمال کیا گیا۔

اس دھماکے سے تھانے کے قریب اور بازار میں موجود دس گاڑیوں کو بھی نقصان پہنچا۔

دھماکے کے فوراً بعد پولیس نے علاقے کو گھیرے میں لے لیا جبکہ امدادی کارروائیاں شروع کر دی گئیں اور زخمیوں کو سول ہسپتال منتقل کیا گیا۔

نامہ نگار کے مطابق جس وقت دھماکہ ہوا اس وقت بازار میں بہت رش تھا اور لوگ عید کی خریداری کے لیے جمع تھے۔

بلوچ یونائیٹڈ آرمی نامی علیحدگی پسند تنظیم نے بی بی سی اردو کو فون کر کے اس دھماکے کی ذمہ داری قبول کر لی ہے۔

اسی بارے میں