جسٹس تصدق جیلانی کی بطور نئے چیف جسٹس ’منظوری‘

Image caption جسٹس تصدق حسین جیلانی اُن ججوں میں شامل تھے جنھیں سابق فوجی صدر پرویز مشرف نے تین نومبر 2007 میں ملک میں ایمرجنسی کے نفاذ کے بعد گھروں کو بھیج دیا تھا

صدرِ پاکستان ممنون حسین نے جسٹس تصدق حسین جیلانی کو سپریم کورٹ کا نیا چیف جسٹس بنانے کی منظوری دی ہے تاہم اس کا نوٹیفکیشن چند روز میں جاری کیا جائے گا۔

سپریم کورٹ کے رجسٹرار ڈاکٹر فقیر حسین نے ہمارے نامہ نگار شہزاد ملک کو بتایا کہ اُنھوں نے نئے چیف جسٹس کی تقرری کے لیے حکومت کو خط لکھا تھا۔ اس کے علاوہ نئے چیف جسٹس کی حلف برداری کی تقریب کے لیے صدر مملکت سے وقت مانگا گیا ہے۔

نئے چیف جسٹس کی حلف برداری کی تقریب 12 دسمبر کو ایوان صدر میں ہوگی۔ پاکستان کے موجودہ چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری 11 دسمبر کو ریٹائر ہور ہے ہیں۔

تصدق حسین جیلانی اُن ججوں میں شامل تھے جنھیں سابق فوجی صدر پرویز مشرف نے تین نومبر 2007 میں ملک میں ایمرجنسی کے نفاذ کے بعد گھروں کو بھیج دیا تھا تاہم وہ مارچ 2008 میں وکلا بحالی کے لیے شروع کیے جانے والے لانگ مارچ کی وجہ سے چیف جسٹس سمیت بحال ہونے والے دیگر ججوں میں شامل نہیں تھے۔

جسٹس تصدق حسین جیلانی نے سپریم کورٹ کے سابق چیف جسٹس عبدالحمید ڈوگر کے دور میں ہی دوبارہ حلف لینے کے بعد اُنھیں عہدے پر بحال کردیا گیا تھا۔

جسٹس تصدق حسین جیلانی کو لاہور ہائی کورٹ سے ترقی دے کر سپریم کورٹ کا جج تعینات کیا گیا تھا۔ وہ سات ماہ تک پاکستان کے چیف جسٹس کے عہدے پر فائز رہیں گے۔ جسٹس تصدق حسین جیلانی اس وقت قائم قام چیف الیکشن کمشنر بھی ہیں۔

یاد رہے کہ آئین کے آرٹیکل 175 کی شق 3 کے تحت سپریم کورٹ میں ججوں کی تعیناتی جوڈیشل کمیشن اور پارلیمانی کمیٹی کی سفارشات کی روشنی میں ہوگی جب کہ چیف جسٹس کا عہدہ خالی ہونے پر سپریم کورٹ کے سنیئر ترین جج کو اس عہدے پر فائز کیا جائے گا۔

تصدق حسین جیلانی کا چیف جسٹس کا عہدہ سنبھالنے کے بعد جسٹس ناصر الملک سپریم کورٹ کے سینیئر ترین جج ہوں گے اس کے بعد جسٹس جواد ایس خواجہ دوسرے سینیئرترین جج ہیں۔

تصدیق حیسن جیلانی چھ جولائی 1949 کو پیدا ہوئے۔ اُنھوں نے جنوبی پنجاب کے شہر ملتان میں بطور وکیل اپنی پریکٹس کا آغاز کیا۔ اُنھیں 1983 میں پنجاب کے ایڈووکیٹ جنرل کے عہدے پر تعینات کیا گیا۔

تصدق حیسن جیلانی کو سات اگست 1994 میں لاہور ہائی کورٹ کا جج تعینات کیا گیا، جب کہ وہ 31 جولائی 2004میں سپریم کورٹ کے جج مقرر ہوئے۔

اسی بارے میں