پی ٹی آئی کا مہنگائی کے خلاف احتجاج کا اعلان

Image caption عمران خان نے مقامی حکومت کے انتخابات عدلیہ زیرِ نگرانی کرانے کا مطالبہ کیا ہے

پاکستان تحریکِ انصاف کے رہنما عمران خان نے کہا ہے کہ ان کی جماعت مہنگائی کے خلاف 22 دسمبر کو لاہور میں ’ایک اور ثونامی‘ کا مظاہرہ کرتے ہوئے احتجاجی ریلی نکالے گی۔

عمران خان نے مہنگائی کے خلاف احتجاج کرنے کا اعلان سنیچر کو لاہور میں ایک پریس کانفرنس کے دوران کیا۔

انھوں نے کہا کہ ان کی جماعت اپنی سایسی حریفوں کے ساتھ مل کر احتجاج کرے گی جبکہ انھوں نے دوسری سیاسی جماعتوں کو بھی ان کے احتجاج میں شریک ہونے کی دعوت دی۔

عمران خان نے دعویٰ کیا کہ ’تحریکِ انصاف پاکستان میں واحد سیاسی جماعت ہے جس کے پاس سٹریٹ پاور ہے۔‘

انھوں نے خبردار کیا کہ’اگر کسی نے انھیں روکنے کی کوشش کی تو روکنے والے خود نتائج کے ذمہ دار ہوں گے۔‘

تحریکِ انصاف کے سربراہ نے کہا کہ’حکومت کا ہنی مون کا وقت ختم ہو چکا ہے، امیر کے لیے ایک قانون اور غریب کے لیے دوسرا قانون ایک بہت بڑی ناانصافی ہے۔‘

انھوں نے کہا کہ’وقت آ چکا ہے کہ اس بات کا فیصلہ ہو کہ ملک میں یا تو صرف ایک خاندان کی بادشاہت کا اعلان ہو یا صحیح معنوں میں جمہوریت کی طرف پیش رفت ہو۔‘

عمران خان نے پنجاب میں مقامی حکومت کے پنجاب لوکل باڈیز ایکٹ کو بھی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ تمام سیاسی جماعتوں نے اسے مسترد کر دیا ہے۔

انھوں نے مطالبہ کیا کہ مقامی حکومت کے انتخابات عدلیہ کی زیرِ نگرانی کرائے جائیں۔

پاکستان کے مقامی ذارئع ابلاغ کے مطابق پاکستان پیپلز پارٹی کے نوجوان رہنما بلاول بھٹو زرداری نے بھی اپنے ایک ٹوئٹر پیغام میں مہنگائی کے خلاف پاکستان کے تحریکِ انصاف کے احتجاجی ریلی کی حمایت کا عندیہ دیا ہے۔

اسی بارے میں