دہشت گردی کی بیماری کو ختم کر دیں گے: نواز شریف

نواز شریف نے یہ بات جمعرات کو وزیر اعظم ہاؤس میں بِل اور ملنڈا گیٹ فاؤنڈیشن کے صدر ڈاکٹر کرس ایلیئس سے ملاقات کے دوران
Image caption نواز شریف نے پاکستان کے عوام کی جانب سے گیٹ فاؤنڈیشن کا شکریہ ادا کیا

پاکستان کے وزیر اعظم محمد نواز شریف کا کہنا ہے کہ حکومت ملک سے پولیو کے خاتمے کے لیے پر عزم ہے اور وہ شورش زدہ علاقوں میں پولیو مہم میں شامل عملے کے تحفظ کو یقینی بنائیں گے۔

نواز شریف نے یہ بات جمعرات کو وزیر اعظم ہاؤس میں بِل اور ملنڈا گیٹ فاؤنڈیشن کے صدر ڈاکٹر کرس ایلیئس سے ملاقات کے دوران کہی۔

نواز شریف نے اس موقع پر یہ بھی کہا کہ وہ پاکستان سے دہشت گردی کی بیماری کو ختم کر دیں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ دہشت گردی ایک بیماری ہے اگر اس بیماری کو ختم کر دیا گیا تو تمام بیماریوں سے چھٹکارا حاصل کر لیں گے۔

وزیر اعظم کا کہنا تھا کہ حکومت بِل اینڈ ملنڈا گیٹ فاؤنڈیشن کے تجربات سے پورا فائدہ اٹھائے گی تاکہ پولیو کا خاتمہ کیا جا سکے اور بچوں میں ہونے والی اموات پر قابو پایا جا سکے۔

ان کا کہنا تھا کہ: ’ہم گیٹس فاؤنڈیشن کے ساتھ قریبی تعاون جاری رکھیں گے تاکہ ہم ملکی سطح پر کی جانے والی کوششوں کو مضبوط کر سکیں اور دنیا میں پولیو کے خاتمے میں اہم کردار ادا کر سکیں۔‘

وزیر اعظم نواز شریف نے پاکستان میں پولیو کے خاتمے کے لیے بل اور میلنڈا گیٹ فاونڈیشن کو سراہا اور پاکستان کے لوگوں کی طرف سے ان کا شکریہ بھی ادا کیا۔

بِل اینڈ میلنڈا گیٹ فاؤنڈیشن کے وفد کی فاٹا اور کراچی میں پولیو کے کیسز پر خدشات کے جواب میں نواز شریف کا کہنا تھا کہ ہم شورش زدہ علاقوں میں پولیو مہم کے کارکنوں کی سکیورٹی کو یقینی بنانے کی کوشش کر رہے ہیں۔

فاؤنڈیشن کے صدر ڈاکٹر کرس ایلیئس نے اس موقع پر بچوں کی صحت کے شعبے میں پاکستان کے ساتھ تعاون کے عزم کا اعادہ کیا۔

خیال رہے کہ پاکستان کے کچھ علاقوں میں شدت پسندوں کی جانب سے اس مہم کی مخالفت کی وجہ سے ہزاروں بچے قطرے پینے سے محروم رہے ہیں۔

اس سال پاکستان میں پولیو کے 75 کیس سامنے آئے ہیں جب کہ گذشتہ برس 58 تھے۔ ان میں سے زیادہ تر قبائلی علاقوں اور صوبہ خیبر پختونخوا سے سامنے آئے تھے۔ دوسری جانب سنہ 2012 سے لے کر اب تک 30 سے زیادہ پولیو مہم کے کارکنان اور ان کے محافظ حملوں میں مارے جا چکے ہیں۔

دنیا بھر میں پاکستان ان تین ممالک میں شامل ہے جہاں پولیو کا خاتمہ نہیں ہو سکا۔

اسی بارے میں