بلوچستان: پنجگور ہوائی اڈے پر راکٹ حملہ

Image caption سول ایوی ایشن اتھارٹی کا ایک انتہائی اہم ریڈار پنجگور کے ہوائی اڈے پر نصب ہے

پاکستان کے صوبہ بلوچستان میں ایران کی سرحد سے متصل ضلعے پنجگور کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر راکٹ سے حملہ کیا گیا۔

پنجگور میں مقامی پولیس کے اہل کار نے بی بی سی سے فون پر بات کرتے ہوئے بتایا کہ نامعلوم افراد نے پیر کی شب ہوائی اڈے پر دو راکٹ داغے۔

پولیس کے مطابق دونوں راکٹ ہوائی اڈے اور سول ایوی ایشن اتھارٹی کے ایک اہم ریڈار کے قریب گرے اور دھماکے سے پھٹ گئے۔

پولیس کے مطابق اس حملے میں کوئی جانی اور مالی نقصان نہیں ہوا اور پولیس کو شبہ ہے کہ اس حملے کا بظاہر نشانہ ہوائی اڈہ اور ہوائی اڈے کا ریڈار تھا۔

یاد رہے کہ سول ایوی ایشن اتھارٹی کا ایک انتہائی اہم ریڈار پنجگور کے ہوائی اڈے پر نصب ہے جس کے ذریعے پنجگور کی فضائی حدود سے ملکی اور بین الاقوامی پروازوں کو کنٹرول کیا جاتا ہے۔

حکام کا کہنا ہے کہ اگر ریڈار کو حملے کے نتیجے میں نقصان پہنچتا تو اس سے ملکی اور بین الاقوامی پروازوں کو کنٹرول کرنے میں شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ سکتا تھا۔

Image caption اس ہوائی اڈے پر پاکستان کی قومی ہوائی کمپنی پاکستان انٹرنیشنل ائیر لائنز کی پروازیں جاتی ہیں

واضح رہے کہ پنجگور کا شمار بلوچستان کے ان علاقوں میں ہوتا ہے جو شورش سے زیادہ متاثر ہیں اور اس کے ہوائی اڈے پر پاکستان کی قومی ہوائی کمپنی پاکستان انٹرنیشنل ائیر لائنز کی پروازیں جاتی ہیں۔

جون 2011 میں پی آئی اے نے پنجگور سے شارجہ کے لیے بین الاقوامی پروازوں کا سلسلہ شروع کیا جو تربت کے راستے متحدہ عرب امارات کی ریاست جاتی تھی۔

یاد رہے کہ پنجگور کو 2011 ہی میں بین الاقوامی ہوائی اڈے کا درجہ دیا گیا تھا۔

اس علاقے میں سیکورٹی فورسز اور سرکاری تنصیبات پر پہلے بھی حملے ہوتے رہے ہیں۔

اسی بارے میں