راولپنڈی میں فائرنگ سے پروفیسر زخمی

پاکستان کے صوبہ پنجاب کے شہر راولپنڈی میں نامعلوم افراد کی فائرنگ سے مقامی کالج کے پروفیسر سید نذیر حسین عمرانی زخمی ہو گئے ہیں۔

یہ واقعہ صبح نو بجے کے قریب راولپنڈی کے علاقے صادق آباد میں پیش آیا۔

صادق آباد تھانے کے ایس ایچ او اللہ یار نے بی بی سی کو بتایا کہ بدھ کی صبح موٹر سائیکل پر سوار دو افراد نے پروفیسر سید نذیر حسین عمرانی پر فائرنگ کی۔

انہوں نے بتایا کہ پروفیسر عمرانی کو سینے پر دو اور چہرے پر ایک گولی لگی۔

ان کا کہنا تھا کہ پروفیسر عمرانی کو ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے جہاں آپریشن کے بعد ان کی حالت اب خطرے سے باہر ہے۔

پولیس کے مطابق سید نذیر حسین عمرانی کا تعلق اہلِ تشیع سے ہے اور وہ قصرِ سجاد امام بارگاہ کے امام بھی تھے۔

ایس ایچ او کے مطابق اس حملے کی تحقیقات کا آغاز کر دیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ ملک میں فرقہ وارانہ ٹارگٹ کلنگ میں حالیہ عرصے میں اضافہ ہوا ہے۔

چند روز قبل اسلام آباد میں فائرنگ سے اہل سنت والجماعت کے رہنما سمیت دو افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

ان سے پہلے گذشتہ ماہ لاہور میں تنظیم کے صوبائی صدر شمس الرحمان معاویہ کو بھی لاہور میں نامعلوم مسلح افراد نے ہدف بنا کر ہلاک کیا تھا۔

اسی بارے میں