بلوچستان: ’بےگھر افراد کو جانے کی اجازت دی جائے‘

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption عدالت نے کہا کہ آئین کے تحت شہریوں کی قانونی نقل و عمل پر کوئی پابندی عائد نہیں کی جاسکتی

پاکستان کے صوبہ بلوچستان کی ہائی کورٹ نے ڈیرہ بگٹی سے بے گھر ہونے والے ہزاروں افراد کو ضلع میں جانے کی اجازت دینے کا حکم جاری کیا ہے۔

عدالت نے یہ حکم جمہوری وطن پارٹی کے رہنما نوابزادہ شاہزین بگٹی کی جانب سے دائر کی جانے والی ایک درخواست پر دیا۔

درخواست میں موقف اختیار کیا گیا تھا کہ ڈیرہ بگٹی سے تعلق رکھنے والے ہزاروں افراد اپنے گھروں کو واپس جانا چاہتے ہیں لیکن انتظامیہ انھیں جانے نہیں دے رہی ہے جس کے باعث یہ افراد سردی کے باعث شدید مشکلات کا شکار ہیں۔

بلوچستان ہائی کورٹ نے نوابزادہ شاہزین بگٹی کی درخواست کو نمٹاتے ہوئے کہا کہ آئین کے تحت شہریوں کی قانونی نقل و عمل پر کوئی پابندی عائد نہیں کی جاسکتی۔

یاد رہے کہ اقوام متحدہ کے ادارے برائے اطفال یونیسیف نے ایک رپورٹ میں کہا تھا کہ بلوچستان میں 80 ہزار سے زیادہ بے گھر ہونے والے ایسے متاثرین ہیں جنہیں ہنگامی بنیادوں پر خوراک، صحت، پینے کے لیے صاف پانی اور رہا ئش کی ضرورت ہے۔ ان متاثرین میں زیادہ تعداد ان بچوں اور خواتین کی ہے جو خطرناک حد تک عدم غذائیت کاشکار ہیں۔

پاکستان کی اس وقت کی وفاقی اور صوبائی حکومت نے نہ صر ف یونیسیف کی رپورٹ کوسیاسی بنیادوں پر مستر د کر دیا تھا بلکہ یونیسف اور دیگرامدادی اداروں کو کام کرنے سے بھی روک دیا تھا۔

اسی بارے میں