’فوج اپنے وقار کا ہر حال میں تحفظ کرے گی‘

تصویر کے کاپی رائٹ ispr
Image caption جنرل راحیل شریف نے فوج کا سربراہ بننے کے بعد فوج پر تنقید کے حوالے سے پہلی بار اپنا ردعمل ظاہر کیا ہے

پاکستانی فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف نے کہا ہے کہ پاکستانی فوج ملک کے تمام اداروں کو قدر کی نگاہ سے دیکھتی ہے لیکن پاکستان فوج کے وقار کا ’ہرحال میں‘ دفاع کرے گی۔

فوج کے تعلقات عامہ کے ادارے آئی ایس پی آر کی جانب سے جاری ہونے والے بیان میں کہاگیا ہے کہ چیف آف آرمی سٹاف نے حالیہ دنوں میں’بعض عناصر کی طرف سے پاکستانی فوج پر غیر ضروری تنقید‘ پر افسروں اور جوانوں کے تحفظات کے بارے میں کہا کہ فوج اپنے ’وقار کا ہرحال میں تحفظ کرے گی۔‘

خفیہ اداروں کے کردار پر اعتراض

چیف آف آرمی سٹاف نے غازی بیس تربیلہ میں پاکستان فوج کے سپیشل سروسز گروپ (ایس ایس جی) کے ہیڈکوارٹر کےدورے کے دوران کہا کہ پاکستانی فوج نے ہمیشہ قومی سلامتی اور تعمیر و ترقی میں نمایاں کردار ادا کیا ہے اور وہ یہ اہم فریضہ سر انجام دیتی رہے گی۔

چیف آف آرمی سٹاف نے کہا کہ ملک اندرونی اور بیرونی مشکلات سے دوچار ہے اور پاک فوج تمام اداروں کو قدر کی نگاہ سے دیکھتی ہے۔

چیف آف آرمی سٹاف نے سپیشل سروسز گروپ کے افسروں اور جوانوں کی دہشت گردوں کے خلاف کارروائیوں میں ان کی کامیابیوں کو سراہا۔

انہوں نے کہا کہ پاکستانی فوج ایس ایس جی کی بہادری اور جنگی مہارت پر فخر کرتی ہے: ’ہماری ایس ایس جی کا شمار دنیا بھر کی بہترین سپیشل فورسز میں ہوتا ہے۔‘

چیف آف آرمی سٹاف نے کہا کہ ایس ایس جی کو انتہائی حساس، پیچیدہ اور دشوار صورتِ حال میں کام کرنا پڑتا ہے، اس کے باوجود ان کی کارکردگی ہمیشہ قابلِ تحسین رہی ہے۔

ایس ایس جی کے افسروں اور جوانوں سے بات چیت کے دوران چیف آف آرمی سٹاف کے کہا کہ پاک فوج نے مادرِ وطن کے تحفظ اور سلامتی کے سلسلے میں کسی بھی قسم کی قربانی دینے سےنہ کبھی دریغ کیا اور نہ کرے گی۔

قبل ازایں چیف آف آرمی سٹاف کا تربیلہ پہنچنے پر وائس چیف آف جنرل سٹاف میجر جنرل غیور محمود اور جنرل آفیسر کمانڈنگ ایس ایس جی میجر جنرل عابد رفیق نے استقبال کیا

اسی بارے میں