امریکہ بھارت پر اپنا اثرو رسوخ استعمال کرے: پاکستان

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption پاکستان کا خطے کی سلامتی میں نہایت اہم کردار ہے اور مریکا پاکستان کے ساتھ تمام شعبوں میں تعاون جاری رکھے گا: جان کیری

پاکستان کے وزیراعظم کے مشیر برائے قومی سلامتی اور خارجہ امور سرتاج عزیز نے امریکہ سے کہا ہے کہ وہ علاقائی امن اور معاشی ترقی کے لیے بھارت پر پاکستان کےساتھ مل کر کام کرنے کے لیے اپنا اثرورسوخ استعمال کرے۔

منگل کو اسلام آباد میں امریکی وزیرِ خارجہ جان کیری کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرس سے خطاب کرتے ہوئے سرتاج عزیز نے کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان خارجہ سطح کے تعلقات کی منسوخی، لائن آف کنٹرول اور ورکنگ باؤنڈری پر بھارت کی بلا اشتعال فائرنگ کے بڑھتے ہوئے واقعات باعثِ تشویش ہیں۔

خارجہ امور کے مشیر نے مسئلہ کشمیر پر بات کرتے ہوئے کہا کہ مسئلہ کشمیر کو شامل کیے بغیر بھارت سے مذاکرات کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔

سرتاج عزیز کے مطابق آپریشن ضرب عضب میں حقانی نیٹ ورک کا’ کمانڈ اینڈ کنٹرول سسٹم‘ تباہ کر دیا گیا ہے اور اب ان کی سرحد پار کارروائیاں ممکن نہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ دہشت گردوں کے خلاف نیشنل ایکشن پلان کے اثرات جلد نظر آئیں گے۔

اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے امریکی وزیرِ خارجہ جان کیری نے کہا کہ پاکستان اور بھارت کے بہتر تعلقات دونوں ممالک کے مفاد میں ہیں جنھیں سفارتی ذرائع سے حل کیا جانا چاہیے۔

جان کیری نے کہا کہ امریکہ پاکستان اور بھارت کے درمیان تعلقات میں بہتری کے لیے تعاون کرنے پر تیار ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ ISPR
Image caption سانحہ پشاور پرامریکی حکومت اور عوام افسردہ ہیں: امریکی وزیرِ خارجہ

جان کیری نے شمالی وزیرستان میں دہشت گردوں کے خلاف جاری پاکستانی فوج کے آپریشن ’ضرب عضب‘کی کامیابیوں کو ’اہم‘ قرار دیا۔

امریکی وزیرِ خارجہ کے مطابق پاکستان تمام دہشت گردوں کے خلاف کارروائی کر رہا ہے اور امریکہ دہشت گردی کے خلاف پاکستان کے اقدامات کو سراہتا ہے۔

انھوں نے کہا کہ امریکہ دہشت گردی کے خلاف پاکستان کی حمایت جاری رکھے گا اور اس کو مزید وسعت دے گا۔

جان کیری نے شمالی وزیرستان آپریشن کے دوران بے گھر ہونے والے آئی ڈی پیزکی واپسی کے لیے پاکستان کو 25 کروڑ ڈالر دینے کا بھی اعلان کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کا خطے کی سلامتی میں نہایت اہم کردار ہے اور امریکہ پاکستان کے ساتھ تمام شعبوں میں تعاون جاری رکھے گا۔

امریکی وزیر خارجہ نے کہا کہ افغانستان اور امریکہ کے درمیان تعلقات ختم نہیں ہوئے بلکہ تبدیل ہو رہے ہیں۔

جان کیری نے پشاور کے آرمی پبلک سکول پر طالبان کے حملے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سانحہ پشاور پرامریکی حکومت اور عوام افسردہ ہیں۔

دریں اثنا امریکی وزیرِ خارجہ جان کیری نے راولپنڈی میں پاکستانی فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف سے جنرل ہیڈ کوارٹر میں ملاقات کی۔

آیس ایس پی آر کی جانب سے جاری کیے جانے والے ایک بیان کے مطابق جان کیری نے شہدا کی یادگار پر پھولوں کی چادر چڑھائی۔

آئی ایس پی آر کے مطابق جان کیری نے دہشت گردی کی جنگ میں ہلاک ہونے والے پاکستانی فوجیوں کو خراجِ عقیدت پیش کیا۔+++

اسی بارے میں