ساحلی شہر گوادر میں فائرنگ سے مقامی رہنما ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ bbc
Image caption گوادر میں شدت پسندی کے واقعات میں ایک بار پھر اضافہ ہوا ہے

پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے ساحلی ضلع گوادر میں فائرنگ کے واقعے میں یونین کونسل کا ایک نومنتخب چیئرمین ہلاک ہو گیا۔

مقامی پولیس کے مطابق منگل کی شب گوادر شہر کے علاقے نیوٹاؤن میں نامعلوم افراد نے نومنتخب چیئرمین یونین کونسل ناصر حسین پر فائرنگ کی۔

فائرنگ کے نتیجے میں ناصر حسین زخمی ہو گئے اور انھیں مقامی ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ جانبر نہ ہو سکے۔

گوادر میں ایک دن پہلے پیر کو بھی نامعلوم افراد نے واپڈا کے ایک اہلکار کو فائرنگ کر کے ہلاک کر دیا تھا۔

اس کے علاوہ پیر کو گوادر کے علاقے پسنی میں ڈیم تعمیر کرنے والے چھ ملازمین کو اغوا کر لیا گیا تھا۔

اغوا کیے جانے والے ملازمین میں دو انجینیئر اور دو سپروائزر شامل ہیں۔

گیس پائپ لائن تباہ

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption دھماکے سے پلانٹ کو گیس کی سپلائی معطل ہو گئی ہے

منگل کو ڈیرہ بگٹی میں ایک اور گیس پائپ لائن کو دھماکہ خیز مواد سے اڑا دیا گیا۔

لیویز فورس کے مطابق نامعلوم افراد نے پیر کوہ سے سوئی پلانٹ کو جانے والی 18انچ قطر گیس پائپ لائن کو ٹلی مٹ کے علاقے میں دھماکہ خیز مواد سے تباہ کر دیا۔

دھماکے کے نتیجے میں گیس پائپ لائن کے کچھ حصوں کو نقصان پہنچا ہے اور اس کی وجہ سے پلانٹ کو گیس کی فراہمی معطل ہو گئی۔

پسنی میں ملازمین کے اغوا اور گیس پائپ لائن کو دھماکہ خیز مواد سے اڑانے کی ذمہ داری غیر قانونی عسکریت پسند تنظیم بلوچ رپبلیکن آرمی نے قبول کی ہے۔

اسی بارے میں