بوہری برادری کی مسجد کے باہر دھماکہ، دو ہلاک

تصویر کے کاپی رائٹ epa
Image caption کراچی میں ماضی میں بھی بوہری برادری کو نشانہ بنایا جا چکا ہے

پاکستان کے صوبہ سندھ کے شہر کراچی میں ایک مسجد کے باہر کھڑی موٹر سائیکل میں نصب بم پھٹنے سے دو افراد ہلاک اور سات زخمی ہوگئے ہیں۔

یہ دھماکہ کراچی کے علاقے آرام باغ میں نمازِ جمعہ کے بعد بوہری برادری کی مسجد کے مرکزی دروازے کے قریب ہوا۔

انچارج سی آئی ڈی یونٹ کراچی راجا عمر خطاب نے بی بی سی کو بتایا کہ ہلاک ہونے والوں میں ایک بچہ بھی شامل ہے جبکہ سات افراد زخمی ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ اس دھماکے میں بوہری برادری کو دانستہ نشانہ بنانے کی کوشش کی گئی ہے۔

راجا عمر خطاب کے مطابق ابتدائی اندازے کے مطابق یہ دھماکہ ریموٹ کنٹرول ڈیوائس کے ذریعے کیا گیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ نمازِ جمعہ کی وجہ سے آس پاس کی تمام دکانیں بند تھیں جس کی وجہ سے نقصان بہت کم ہوا ہے۔

بوہری برادری کی یہ مسجد بُرہانی ہسپتال کے قریب واقع ہے۔

خیال رہے کہ کراچی میں ماضی میں بھی بوہری برادری کو نشانہ بنایا جا چکا ہے۔

سنہ 2012 میں کراچی کے علاقے حیدری میں ان کے رہائشی علاقے میں ایک دھماکہ ہوا تھا جس میں چھ افراد مارے گئے تھے۔

اسی بارے میں