شراب کی دکان پر بم حملہ، تین ہندو زخمی

تصویر کے کاپی رائٹ THINKSTOCK
Image caption پاکستان میں غیر مسلم اقلیتوں کو شراب کی خریدوفروخت کی اجازت ہے

پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ میں شراب کی ایک دکان پر دستی بم کے حملے میں تین افراد زخمی ہوگئے ہیں۔

پولیس کے مطابق بم حملے کا واقعہ جمعرات کی شب کواری روڈ پر پیش آیا۔

گوالمنڈی پولیس کے ایک اہلکار نے بی بی سی کو بتایا کہ نامعلوم موٹر سائیکل سوار اس سڑک پر واقع ایک دکان کے قریب آئے اور وہاں دستی بم پھینکا۔

دستی بم زوردار دھماکے سے پھٹا جس کے نتیجے میں دکان پر موجود تین افراد زخمی ہوگئے۔

پولیس اہلکار کے مطابق حملے کا نشانہ بننے والی دکان پر شراب فروخت کی جاتی ہے۔

اہلکار کا یہ بھی کہنا تھا کہ زخمی ہونے والے تمام افراد کا تعلق ہندو برادری سے ہے۔

اس حملے کے بعد حملہ آور فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے۔

زخمیوں کو فوری طور پر علاج کے لیے سول ہسپتال منتقل کردیا گیا جہاں ایک کی حالت نازک بتائی جاتی ہے۔

اس واقعے کے محرکات تاحال معلوم نہیں ہو سکے ہیں اور نہ ہی کسی نے اس کی ذمہ داری قبول کی ہے۔

اسی بارے میں