’اپنے دائرۂ اختیار میں رہیں:‘ ڈی جی رینجرز کو وزیراعلیٰ کی چٹھی

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption وزیراعلیٰ کے خط کی ایک نقل وفاقی وزیرِ داخلہ چوہدری نثار کو بھی ارسال کی گئی ہے

سندھ کے وزیر اعلیٰ سید قائم علی شاہ نے ایک خط کے ذریعے رینجرز حکام کو مشورہ دیا ہے کہ وہ اپنے دائرۂ اختیار میں رہیں اور اختیارات سے تجاوز نہ کریں۔

وزیر اعلیٰ ہاؤس کے مطابق وزیرِ اعلیٰ نے یہ خط بدھ کو ڈائریکٹر جنرل رینجرز کو بھجوایا، اور اس کی ایک نقل وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار کو ارسال کی گئی ہے۔

کراچی کا غیر قانونی بجٹ

کور کمانڈروں کا غیر روایتی کردار

اس خط میں رینجرز کو یاددہانی کرائی گئی ہے کہ رینجرز کو انسدادِ دہشت گردی ایکٹ کے تحت دہشت گردی اور سنگین جرائم کی روک تھام کے لیے اختیارات دیے گئے ہیں۔

وزیر اعلیٰ نے خط میں رینجرز کے بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی اور لائنز ایریا ڈیویلپمنٹ پروجیکٹ پر چھاپوں کے بارے میں بھی تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے لکھا ہے کہ رینجرز نے یہ چھاپے مار کر اپنے اختیارات سے تجاوز کیا ہے۔

سید قائم علی شاہ نے رینجرز حکام کو مشورہ دیا ہے کہ وہ اپنے دائرۂ اختیار میں کام کریں اور اس حوالے سے رینجرز کا کردار نوٹیفیکیشن میں واضح ہے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty
Image caption رینجرز کا دعویٰ ہے کہ کراچی کے غیر قانونی بجٹ میں ایک اعلیٰ شخصیت کو بھی حصہ دیا جاتا ہے

خیال رہے کہ رینجرز اور سندھ حکومت کے درمیان اختلاف اُس وقت کھل کر سامنے آئے تھے جب حالیہ چھاپوں سے قبل رینجرز کے ڈی جی کی جانب سے ایک اعلامیہ جاری کیا گیا تھا جس میں دعویٰ کیا تھا کہ کراچی میں سالانہ سوا دو کھرب روپے سے زائد رقم غیر قانونی طریقوں سے وصول کی جاتی ہے، جس میں لینڈ مافیا، بھتہ خوری اور ایرانی پیٹرول کی سمگلنگ وغیرہ شامل ہیں، اور اس عمل میں سیاسی اور مذہبی جماعتیں ملوث ہیں۔

رینجرز نے الزام عائد کیا تھا کہ اس میں ایک اعلیٰ شخصیت کو بھی حصہ دیا جاتا ہے اور اس رقم سے نجی لشکر پالے جاتے ہیں۔

میڈیا میں رینجرز کے ان الزامات کے چرچے کے بعد وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے ریٹائر ججوں کی سربراہی میں ایک کمیٹی تشکیل دی ہے، جو ان الزامات کی تحقیقات کرے گی۔

گذشتہ ہفتے کراچی میں وزیر اعظم کی آمد کے موقعے پر بھی وزیر اعلیٰ سید قائم علی شاہ نے اس معاملے پر انھیں تحفظات سے آگاہ کیا تھا لیکن وزیر اعظم کا کوئی بیان سامنے نہیں، جبکہ پیر کو وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی نے ڈی جی رینجرز کے بیان کی توثیق کی۔

اسی بارے میں