کشمیری رہنما سردار عبدالقیوم انتقال کرگئے

تصویر کے کاپی رائٹ TAZEEM YASEEN
Image caption سردار عبدالقیوم چار بار پاکستان کے زیرِ انتظام کشمیر کے صدر رہے

پاکستان کے زیرِ انتظام کشمیر کے سابق صدر اور وزیر اعظم سردار عبدالقیوم خان انتقال کر گئے ہیں۔

پاکستان کے سرکاری میڈیا پر نشر ہونے والی خبروں میں بتایا گیا ہے کہ ان کی عمر 91 برس تھی۔

ان کا تعلق ضلع باغ کے علاقے غازی آباد سے تھا۔ میٹرک کے بعد سردار قیوم نے برٹش انڈین آرمی کے انجینیئرنگ کور میں 1942 سے 1946 تک ملازمت کی۔ اس کے فوراً بعد انھوں نے کشمیر فریڈم موومنٹ میں شمولیت اختیار کر لی۔

وہ آل جموں اینڈ کشمیر مسلم کانفرنس کے 14 بار صدر منتخب ہوئے۔

1971 میں عام انتخابات کے ذریعے وہ پاکستان کے زیرانتظام کشمیر کے صدر منخب ہوئے۔ 1985 میں سیاسی سرگرمیوں پر پابندی کے بعد وہ صدر بن گئے، اور 1990 میں آپ چوتھی بار آزاد کشمیر کے صدر منتخب ہو گئے۔

1991 میں انھوں نے صدر کے عہدے سے استعفیٰ دے کر وزارت اعظمٰی کا قلم دان سنبھالا۔ 1996 میں وہ قائد حزب اختلاف منتخب ہوئے اور 2001 میں دوبارہ قانون سازا سمبلی کے رکن منتخب ہو گئے۔

سردار قیوم نے متعدد کتب اور مضامین بھی لکھے۔

ان کی تدفین کے وقت کا ابھی تک اعلان نہیں کیا گیا۔