برفانی تودے کی زد میں آ کر ’ایک کوہ پیما لاپتہ، چھ زخمی‘

تصویر کے کاپی رائٹ The Adventure Blog
Image caption زخمی کوہ پیماؤں میں سمٹ کلائمب ٹیم کی جاپانی رکن صومیئو سوزوکی بھی شامل ہیں جن کی حالت شدید زخمی بتائی جا رہی ہے

پاکستان اور چین کے سرحدی علاقے میں واقع قراقرم پہاڑی سلسلے میں سات کوہ پیماؤں پر مشتمل ایک ٹیم منگل کی صبح برفانی تودے کی زد میں آگئی جس کے بعد ایک پاکستانی کوہ پیما لاپتہ ہے جبکہ دیگر زخمی حالت میں بیس کیمپ واپس پہنچے ہیں۔

قراقرم پہاڑی سلسلے میں براڈ پیک نامی پہاڑ پر پاکستانی، جاپانی اور چین کے سات کوہ پیماؤں پر مشتمل یہ ٹیم برفانی تودے کی زد میں آگئی۔ کوہ پیماؤں کی ٹیم کے اراکین ہسپتال پہنچائے جانے کے لیے ریسکیو ٹیم کا انتظار کر رہے ہیں۔

تاہم موسمی خرابی کی وجہ سے سکردو سے ہیلی کاپٹر پرواز نہیں کر سکے ہیں اور اب بدھ کی صبح کوہ پیماؤں تک پہنچنے کی کوشش کی جائے گی۔

پاکستان میں ایلپائن کلب کا کہنا ہے کہ براڈ پیک کے بیس کیمپ سے ملنے والی معلومات کے مطابق گذشتہ شب علاقے میں شدید برفباری کا سلسلہ جاری تھا۔ بیان کے مطابق منگل کی صبح بیشتر کوہ پیماؤں نے پہاڑ پر نہ جانے کا فیصلہ کیا۔ تاہم جاپانی اور چینی کوہ پیماؤں کے ایک گروہ نے موسمی خرابی کے باوجود پہاڑ پر جانے کا فیصلہ کیا۔

کلب کی جانب سے جاری کی گئی پریس ریلیز کے مطابق جاپانی، چینی اور پاکستانی کوہ پیماؤں کی ٹیم پہاڑ پر سی ون نامی پوسٹ کی جانب روانہ تھے کہ مقامی وقت کے مطابق تقریباً گیارہ بجے ایک برفانی تودہ گرا جس کی زد میں ٹیم آگئی۔

کوہ پیماؤں کی اس ٹیم کے ایک رکن نے زخمی حالت میں مدد کے لیے ہنگامی پیغامات بھیجے جس کے بعد انھیں بیس کیمپ واپس لا کر ابتدائی طبی امداد دی گئی۔ ایک پاکستانی کوہ پیما ابھی بھی لاپتہ ہیں جبکہ دیگر افراد کسی ہسپتال جانے کے لیے مدد کے منتظر ہیں۔

زخمی کوہ پیماؤں میں سمٹ کلائمب ٹیم کی جاپانی رکن صومیئو سوزوکی بھی شامل ہیں جن کی حالت شدید زخمی بتائی جا رہی ہے۔ لاپتہ پاکستانی کوہ پیما کا نام ابھی تک جاری نہیں کیا گیا ہے۔

بیس کیمپ پر موجود افراد کا کہنا ہے کہ پہاڑ پر موسم انتہائی خراب ہے کیونکہ ابتدائی امدادی کارروائیوں کے دوران ہی مزید دو برفانی تودے گرے۔

کیمپ میں موجود لوگوں نے زخمی کوہ پیماؤں کی تشویش ناک حالت کے باعث انھیں ہسپتال منتقل کرنے کے لیے ہیلی کاپٹروں کی مدد مانگی ہے تاہم موسمی خرابی کی وجہ سے سکردو سے ہیلی کاپٹر پرواز نہیں کر سکے ہیں اور اب بدھ کی صبح کوہ پیماؤں تک پہنچنے کی کوشش کی جائے گی۔

اسی بارے میں