کیچ اور لسبیلہ میں فائرنگ کے واقعات میں دو افراد ہلاک

Image caption ایف ڈبلیو او کے اہلکاروں پر اس حملے کی ذمہ داری کالعدم بلوچ عسکریت پسند تنظیم بلوچستان لبریشن فرنٹ نے قبول کی ہے

پاکستان کے صوبہ بلوچستان کے ضلع کیچ میں ایک حملے میں فرنٹیئر ورکس آرگنائیزیشن(ایف ڈبلیو او) کا ایک اہلکار ہلاک اور تین زخمی ہوگئے جبکہ ضلع لسبیلہ میں ایک اور واقعے میں لیویز فورس کا اہلکار ہلاک ہوا۔

ایف ڈبلیو او کے اہلکاروں پر فائرنگ کا واقعہ ضلع کیچ کے علاقے دشت میں پیش آیا۔

کیچ میں سول انتظامیہ کے ایک اہلکار کے مطابق منگل کو ایف ڈبلیو او کے اہلکار اپنے معمول کی کام کے سلسلے میں جارہے تھے۔ جب ان کی گاڑی دشت سنگئی کے علاقے میں پہنچی تو نامعلوم مسلح افراد نے اس پر فائرنگ کی۔

اس فائرنگ کے نتیجے میں ایف ڈبلیو او کے چار اہلکار زخمی ہوگئے ہیں۔

سول انتظامیہ کے اہلکار نے بتایا ہے کہ زخمیوں کو علاج کے لیے ہسپتال منتقل کردیا گیا جہاں ان میں سے ایک زخموں کی تاب نہ لاکر چل بسا۔

ایف ڈبلیو او کے اہلکاروں پر اس حملے کی ذمہ داری کالعدم بلوچ عسکریت پسند تنظیم بلوچستان لبریشن فرنٹ نے قبول کی ہے۔

فرنٹیئر ورکس آرگنائزیشن مکران ڈویژن میں ان شاہراہوں کی تعمیر میں مصروف ہے جو کہ پاک چین اقتصادی راہداری کا حصہ ہیں۔ کیچ اور پنجگور میں اب تک ایف ڈبلیو او کے اہلکاروں پر 136سے زائد حملے ہوئے ہیں۔

فائرنگ کا ایک اور واقعہ ضلع لسبیلہ میں لیویز فورس کی ایک چیک پوسٹ پر پیش آیا۔

لسبیلہ انتظامیہ کے ایک اہلکار نے بی بی سی کو بتایا ہے کہ نامعلوم مسلح افراد نے پانچی میں لیویز فورس کے ایک چیک پوسٹ پر فائرنگ کی۔ فائرنگ کے نتیجے میں فورس کا ایک اہلکار ہلاک ہوا

اسی بارے میں